اترپردیش میں 1967 کے بعد سب سے کم مسلم امیدوار ہوئے کامیاب ، پڑھئے کس پارٹی سے کتنے جیتے ؟

Mar 11, 2017 08:17 PM IST | Updated on: Mar 12, 2017 10:38 AM IST

لکھنو : یوپی اسمبلی انتخابات کے نتائج کی تصویر بالکل صاف ہو چکی ہے۔ اس مرتبہ ریاست میں بی جے پی کو تاریخی جیت حاصل ہوئی ہے جبکہ ایس پی -کانگریس اتحاد اور بی ایس پی کو کراری شکست حاصل ہوئی ہے۔ ریاست میں بی جے پی کی مکمل اکثریت کے ساتھ حکومت بننے جا رہی ہے ، لیکن ایک بڑا اہم سوال حکومت میں مسلمانوں کی نمائندگی کو لے کر بھی ہے۔

یوں تو اس مرتبہ 200 سے زائد مسلم امیدوار میدان میں تھے ، مگر ان میں سے صرف 25 مسلم امیدوار ہی الیکشن جیت کر اسمبلی تک پہنچے ہیں ۔ تاہم ان منتخب نمائندوں میں سے کوئی بھی حکومت میں نہیں ہو گا ، کیونکہ بی جے پی نے اس مرتبہ ایک بھی ٹکٹ کسی مسلمان کو نہیں دیا تھا ۔

اترپردیش میں 1967 کے بعد سب سے کم مسلم امیدوار ہوئے کامیاب ، پڑھئے کس پارٹی سے کتنے جیتے ؟

آئیے ہم آپ کو کامیاب مسلم امیدواروں کے نام بتاتے ہیں ، جو اس بار اسمبلی پہنچے ہیں۔

کل جیتےمسلم امیدوار

محبوب علی / ایس پی / امروہہ

ابرار احمد / ایس پی / اسولي

مؤ رضوان / ایس پی / كندركي

ناہید حسن / ایس پی / کیرانہ

نفیس احمد / ایس پی / گوپال پور

نصیر خان / ایس پی / چمروا

نواب جان / ایس پی / ٹھاكردوارا

تسلیم احمد / ایس پی / نجیب آباد

عالم بدی / ایس پی / نظام آباد

محمد فہیم / ایس پی / بلاري

یاسر شاہ / ایس پی / مٹیرا

اکرام قریشی / ایس پی / مرادآباد دیہات

اعظم خان / ایس پی / رام پور

عبداللہ اعظم / ایس پی / سوار

محمد رمضان / ایس پی / شراوستی

اقبال محمود / ایس پی / سنبھل

عرفان سولنکی / ایس پی / سيسامئو

رفیق انصاری / ایس پی / میرٹھ

سہیل اختر / کانگریس/ کانپور کینٹ

مسعود اختر / کانگریس / سہارنپور دیہات

اسلم چودھری / بی ایس پی / دھولانا

محمدمجتبی/ بی ایس پی / پرتاپ پور

محمد اسلم / بی ایس پی / بھنگا

مختار انصاری / بی ایس پی / مئو

شاہ عالم عرف گڈو جمالی / بی ایس پی / مبارک پور

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز