یوپی انتخابات کے بعد تین طلاق پر پابندی پر بڑا فیصلہ ممکن: وزیر قانون روی شنکر پرساد

Feb 06, 2017 09:03 AM IST | Updated on: Feb 06, 2017 09:03 AM IST

غازی آباد۔ مرکزی وزیر روی شنکر پرساد نے کہا ہے کہ مودی حکومت یوپی اسمبلی انتخابات کے بعد ٹرپل طلاق پر پابندی کی سمت میں بڑا قدم اٹھا سکتی ہے۔ یہاں ہفتہ کو منعقد ایک پریس کانفرنس میں پرساد نے کہا کہ یہ روایت خواتین کے احترام کے خلاف ہے اور اس پر پابندی لگائے جانے کی ضرورت ہے۔ مرکزی وزیر قانون نے کہا، 'یوپی اسمبلی انتخابات کے بعد حکومت ٹرپل طلاق پر پابندی لگانے کے لئے بڑا قدم اٹھا سکتی ہے۔' پرساد کے مطابق، مرکزی حکومت 'معاشرے کی برائیوں' کو ختم کرنے کے لئے مصروف عمل ہے۔ پرساد نے یہ بھی کہا کہ حکومت تین نکات کو لے کر سپریم کورٹ میں بھی یہ معاملہ اٹھائے گی۔

پرساد کے مطابق، ٹرپل طلاق کا معاملہ مذہب سے منسلک نہیں ہے۔ یہ معاملہ عورتوں کے احترام سے منسلک ہے۔ پرساد نے کہا کہ حکومت عقیدہ کا احترام کرتی ہے، لیکن عبادت اور سماجی برائی ایک ساتھ نہیں رہ سکتی۔ پرساد نے کہا، 'ہم ہی ایک ایسی پارٹی ہیں جو خواتین کا احترام کرتی ہے۔ دوسری پارٹیاں نہ تو انہیں اچھی جگہ دیتی ہیں اور نہ ان کا احترام کرتی ہیں۔ ' پرساد نے بی ایس پی پر حملہ کرتے ہوئے کہا کہ اسے ذات پات اور سیاست سے اوپر اٹھ کر خواتین کا احترام کرنا چاہئے۔

یوپی انتخابات کے بعد تین طلاق پر پابندی پر بڑا فیصلہ ممکن: وزیر قانون روی شنکر پرساد

فائل فوٹو

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز