یوپی بلدیاتی انتخابات: سخت حفاظتی انتظامات کے درمیان پولنگ جاری

لکھنو۔ اترپردیش میں شہری بلدیاتی انتخابات کے پہلے مرحلہ کی پولنگ سخت حفاظتی انتظامات کے درمیان آج صبح ساڑھے سات بجے شروع ہوگئی۔

Nov 22, 2017 09:26 AM IST | Updated on: Nov 22, 2017 09:27 AM IST

لکھنو۔ اترپردیش میں شہری بلدیاتی انتخابات کے پہلے مرحلہ کی پولنگ سخت حفاظتی انتظامات کے درمیان آج صبح ساڑھے سات بجے شروع ہوگئی۔ وزیراعلی یوگی آدتیہ ناتھ نے گورکھپور میں ووٹ ڈالا۔ انہوں نے گورکھناتھ علاقہ میں واقع پرائمری اسکول میں بنے پولنگ مرکز میں اپناووٹ ڈالا۔ کئی پولنگ مراکز پر صبح سے ہی لمبی قطاریں لگی ہوئی تھیں جبکہ کچھ پرچند ہی لوگ نظر آئے۔ پہلے مرحلہ میں پانچ میونسپل کارپوریشنوں میں بھی الیکشن ہورہا ہے۔ ان میں الیکٹرونک ووٹنگ مشین (ای وی اے) سے پولنگ ہورہی ہے جبکہ سٹی میونسپلٹیز اور نگر پنچایتوں میں بیلٹ پیپر کے ذریعہ لوگ ووٹ ڈال رہے ہیں۔

اس مرحلہ میں 24اضلاع شاملی، میرٹھ، ہاپوڑ، بجنور، بدایوں، ہاتھ رس، کاس گنج، آگرہ، کانپور، جالون، ہمیرپور، چترکٹ، کوشامبی، پرتاپ گڑھ، اناؤ، ہردوئی، امیٹھی، فیض آباد، گونڈا، بستی، گورکھپور، اعظم گرھ، غازی پور اور نکسلزم سے متاثر سون بھدر میں پولنگ چل رہی ہے۔ پولنگ شام پانچ بجے تکے چلے گی۔ پہلے مرحلہ میں سب سے دلچسپ الیکشن ایودھیا میونسپل کارپوریشن کا سمجھا جارہا ہے جہاں سماج وادی پارٹی کے امیدوار کے طورپر مےئر کے عہدہ کے لئے خواجہ سرا گلشن بندومیدان میں ہے۔

یوپی بلدیاتی انتخابات: سخت حفاظتی انتظامات کے درمیان پولنگ جاری

اجودھیا میں ووٹنگ مرکز کے باہر ووٹ ڈالنے کے لئے قطار میں کھڑے لوگ۔

خواجہ سرا کے الیکشن لڑنے کی وجہ سے ایودھیا کا الیکشن لوگوں کی کشش کا مرکزبنا ہوا ہے ۔ ایودھیا میں پہلی بار میئر اور کونسلروں کا ا لیکشن ہوگا کیونکہ اسے حال ہی میں میونسپل کارپوریشن بنایا گیا ہے۔ ریاستی الیکشن کمیشن کے خصوصی افسر جے پی سنگھ نے یہاں بتایا کہ کہیں سے کسی ناخوشگوار واقعہ کی اطلاع نہیں ہے کچھ پولنگ مراکز پر ای وی ایم میں خرابی کی اطلاع ملی تھی جنہیں ٹھیک کراکر پولنگ شروع کرادی گئی ہے۔ تین مرحلوں میں ہونے والے اس الیکشن میں دوسرے اور تیسرے مرحلہ کے لئے 26اور 29نومبر کو پولنگ ہوگی جبکہ یکم دسمبر کو ووٹوں کی گنتی ہوگی۔

اس مرحلہ کی پولنگ کے دوران امن و قانون قائم رکھنے کے لئے مرکزی نیم فوجی دستوں کی 34کمپنیاں مقامی پولیس و انتظامیہ کی مد د کے لئے تعینات کی گئی ہیں۔

Loading...

اس مرحلہ میں پانچ میونسپل کاپوریشن، 71میونسپلٹیوں اور 154شہری پنچایتوں کے لئے ووٹ ڈالے جارہے ہیں۔ پہلے مرحلہ میں چار ہزار 95وارڈوں کے لئے ممبر یا کونسلرمنتخب کئے جائیں گے۔ اس مرحلہ میں ایک کروڑ نو لاکھ رائے دہندگان 11ہزار 679پولنگ مراکز پر اپنے حق رائے دہی کا استعمال کررہے ہیں۔ یوگی آدتیہ ناتھ کے دور اقتدار میں یہ پہلا الیکشن ہے اسلئے اسے ان کے امتحان کے طورپر دیکھا جارہا ہے۔ ودھیانچل ڈویزن کے سون بھدر ضلع سے ملحق پڑوسی ریاستوں بہار، جھارکھنڈ، مدھیہ پردیش او رچھتیس گڑھ کی سرحدوں کو سیل کردیا گیا ہے۔

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز