یوپی بلدیاتی انتخابات : تشدد کے اکا دکا واقعات کے درمیان تیسرے مرحلے میں 53 فیصد پولنگ، یکم دسمبر کو نتائج

Nov 29, 2017 09:51 PM IST | Updated on: Nov 29, 2017 09:56 PM IST

لکھنؤ: ووٹرلسٹ میں گڑبڑی اور فرضی ووٹنگ کے معاملے پر تشدد کے اکا دکا واقعات کے درمیان اترپردیش میں بلدیاتی انتخابات کے تیسرے مرحلے میں آج تقریباً 53 فیصد پولنگ ہوئی۔ بلدیاتی انتخابات کے ووٹوں کی گنتی یکم دسمبر کو ہوگی اور غالباً اسی دن تمام نتائج سامنے آجائیں گے۔ تیسرے مرحلے میں ریاست کے 26 اضلاع میں 94 لاکھ پانچ ہزار ووٹروں میں سے تقریباً 53 فیصد نے اپنے حق رائے دہی کا استعمال کیا ۔

پولنگ شام پانچ بجے ختم ہوئی حالانکہ پولنگ ختم ہونے کے وقت بھی کئی بوتھوں پر سینکڑوں افراد قطاروں میں کھڑے تھے ۔دارالحکومت لکھنؤ کے بالا گنج علاقے میں ایک بوتھ پر آج دوبارہ ووٹ ڈالے گئے۔ بلدیاتی انتخابات کے آخری مرحلے میں بھی کئی پولنگ مراکز پر ووٹرلسٹ میں گڑبڑی کی شکایت ملی۔ کئی پولنگ مراکز پر ووٹر لسٹ میں نام نہیں ہونے کی وجہ سے لوگ واپس لوٹ گئے۔ سہارن پور میں امیدواروں کے دو گروپوں میں جھڑپ ہوگئی لیکن سیکورٹی فورسیز نے صورت حال کوفوراً قابو میں کرلیا ۔

یوپی بلدیاتی انتخابات : تشدد کے اکا دکا واقعات کے درمیان تیسرے مرحلے میں 53 فیصد پولنگ، یکم دسمبر کو نتائج

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز