اترپردیش : عید الاضحی کے موقع پر ممنوعہ جانور کی قربانی کرنے کے الزام میں دو افراد گرفتار

اترپردیش میں مرادآباد کے ڈیلاري علاقے میں ممنوعہ جانور کی قربانی کے معاملے میں پولس نے آج دو افراد کو گرفتار کر لیا جبکہ دیگر دو ملزمان کی تلاش جاری ہے۔ پ

Sep 03, 2017 02:06 PM IST | Updated on: Sep 03, 2017 02:06 PM IST

مرادآباد : اترپردیش میں مرادآباد کے ڈیلاري علاقے میں ممنوعہ جانور کی قربانی کے معاملے میں پولس نے آج دو افراد کو گرفتار کر لیا جبکہ دیگر دو ملزمان کی تلاش جاری ہے۔ پولس سپرنٹنڈنٹ (دیہی) ا دے نارائن سنگھ نے یہاں بتایا کہ عید الاضحی کے موقع پر رہٹا مافی گاؤں میں کچھ لوگ ایک ممنوعہ جانور کو ذبح کر رہے تھے۔ گاؤں والوں کی اطلاع پر پولس جائے وقوعہ پر پہنچی ،لیکن اس سے پہلے ہی لوگ وہاں سے فرار ہو گئے۔ پولس نے موقع سے ممنوعہ جانور کا گوشت، ذبح کرنے کے آلات، ایک زندہ جانور اور بیل گاڑی کا کٹرا برآمد کیا ہے۔

بجرنگ دل اور دیگر تنظیموں نے ملزمان کی گرفتاری کے مطالبے پر جم کر ہنگامہ کیا۔ پولس کسی طرح ان کو سمجھا بجھا کر خاموش کیا۔ اس سلسلے میں پولس نے گاؤں کے چار نوجوانوں کے خلاف مقدمہ درج کیا۔

اترپردیش : عید الاضحی کے موقع پر ممنوعہ جانور کی قربانی کرنے کے الزام میں دو افراد گرفتار

پولس نے کہا کہ اس معاملے میں طیب اور محمد عمر کو گرفتار کر لیا گیا ہے اور باقی افراد کی تلاش کی جا رہی ہے۔ گوشت اور جانور کی باقیات کو میڈیکل جانچ کے لئے بھیجا گیا ہے۔ انسداد گاؤ ذبیحہ ایکٹ اور دیگر دفعات کے تحت ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز