دلتوں کی پڑھائی کے پیسے اکھلیش نے مدرسوں کو دے دئیے: یوگی آدتیہ ناتھ کا الزام

Feb 28, 2017 12:31 PM IST | Updated on: Feb 28, 2017 12:31 PM IST

نئی دہلی۔ بھارتیہ جنتا پارٹی کے اسٹار پرچارک اور گورکھپور کے ایم پی یوگی آدتیہ ناتھ نے وزیر اعلی اکھلیش یادو پر بڑا الزام لگایا ہے۔ نیوز 18 انڈیا سے یوگی آدتیہ ناتھ نے بات چیت میں دوبارہ ہندوؤں سے امتیازی سلوک کا راگ الاپا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اکھلیش حکومت نے دلتوں کی پڑھائی کے پیسے مدرسوں کو دے دئیے۔

یوگی آدتیہ ناتھ کے مطابق یوپی میں دیوا شریف کو بجلی 24 گھنٹے ملتی ہے، لیکن مہادیو کو نہیں۔ یوپی کی ترقی سے متعلق فنڈ کو اکھلیش حکومت نے قبرستانوں کی دیوار بنانے میں خرچ کر دیا۔ انہوں نے سماج وادی پارٹی کے ساتھ بہوجن سماج پارٹی پر بھی حملہ بولا اور کہا کہ ریاست میں امتیازی سلوک کے لیے یہ دونوں ہی ذمہ دار ہیں۔

دلتوں کی پڑھائی کے پیسے اکھلیش نے مدرسوں کو دے دئیے: یوگی آدتیہ ناتھ کا الزام

یوگی آدتیہ ناتھ نے کہا ہے کہ یوپی میں بی جے پی کی حکومت آنے پر سب سے پہلے یوپی میں پھیلے اس امتیازی سلوک کو ختم کیا جائے گا جسے ایس پی-بی ایس پی نے ہندو اور مسلمانوں کے درمیان پیدا کیا ہے۔ اس لئے یوپی میں بی جے پی کی حکومت اور رام مندر بنانے کے لئے ہم سب کو متحد ہونا چاہئے۔

اس سے پہلے یوگی آدتیہ ناتھ نے کہا تھا کہ یوپی میں اگر بی جے پی جیتے گی تو رام مندر کی تعمیر کا راستہ صاف ہو جائے گا۔ بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) یا سماج وادی پارٹی (ایس پی) جیتے گی تو پھر کربلا، قبرستان ہی بنیں گے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز