رابرٹ واڈرا کا مودی حکومت پر حملہ، بولے بینکوں کے ساتھ حکومت کا تال میل نہیں

Jan 09, 2017 01:31 PM IST | Updated on: Jan 09, 2017 01:33 PM IST

نئی دہلی۔ کریڈٹ اور ڈیبٹ کارڈ سے پیمنٹ قبول نہ کرنے کی ملک بھر کے پٹرول پمپ مالکان کی دھمکی کے بعد کانگریس صدر سونیا گاندھی کے داماد رابرٹ واڈرا نے پیر کو مرکزی حکومت کو آڑے ہاتھوں لیا۔ واڈرا نے بد نظمی کو لے کر مرکز کو نشانے پر لیا اور کہا کہ بینکوں اور حکومت کے درمیان ہم آہنگی کی انتہائی کمی ہے۔

رابرٹ واڈرا نے اپنے فیس بک صفحے پر لکھا، 'نوٹ بندی پر بدنظمی اور غیر متوقع طریقہ کار کی ابتدائی چوک سے باہر آنے کے لئے حکومت مایوسی کے دور میں پہنچ چکی ہے۔' انہوں نے لکھا، 'لوگ ڈیبٹ اور کریڈٹ کارڈ زیادہ سے زیادہ استعمال کریں اس کے لئے پہلے تو حکومت نے انہیں رشوت دی اور جب لوگوں نے اسے استعمال کرنا شروع کیا تب بینکوں کے ساتھ ہم آہنگی کی کمی اور ان کی پالیسیوں کی وجہ سے پٹرول پمپ مالکان یہ سخت قدم اٹھانے پر مجبور ہوئے ہیں۔

رابرٹ واڈرا کا مودی حکومت پر حملہ، بولے بینکوں کے ساتھ حکومت کا تال میل نہیں

واڈرا کا بیان آل انڈیا پٹرول ڈیلرس ایسوسی ایشن کی دھمکی کے بعد سامنے آیا ہے جس میں ایسوسی ایشن نے کریڈٹ اور ڈیبٹ کارڈ سے پیمنٹ قبول نہ کرنے کا فیصلہ کیا تھا۔ ایسا کارڈ ٹرانزیکشن پر 1 فیصد اضافی چارج لینے کے بینکوں کے فیصلے کے بعد ہوا تھا۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز