بھیڑ کی جانب سے قتل کیا جانا بربریت ، ریاستی حکومتیں سخت کارروائی کریں: نائيڈوو

Jun 30, 2017 04:32 PM IST | Updated on: Jun 30, 2017 06:02 PM IST

نئی دہلی : اطلاعات و نشریات کے مرکزی وزیر ایم وینکیا نائیڈو نے گئوركشا کے نام پر لوگوں کی سرعام پیٹ پیٹ کر کئے گئے قتل کو وحشیانہ حرکت قرار دیتے ہوئے آج کہا کہ ریاستی حکومتوں کو اسے روکنے کے لئے سخت کارروائی کرنی چاہئے۔

مسٹر نائیڈو نے جھارکھنڈ میں کل ہوئے ایسے ہی ایک واقعے کے سوال پر یہاں صحافیوں سے کہا ' ایسے واقعات ملک کے ہر حصے میں ہو رہے ہیں۔ یہ بربریت ہے جسے ہرگز برداشت نہیں کیا جائے گا۔ وزیر اعظم سمیت ہر کسی نے اس کی مذمت کی ہے۔اگرچہ اسے فرقہ وارانہ نقطہ نظر سے نہیں دیکھا جانا چاہئے۔ '

بھیڑ کی جانب سے قتل کیا جانا بربریت ، ریاستی حکومتیں سخت کارروائی کریں: نائيڈوو

واضح رہے جھارکھنڈ کے رام گڑھ میں مشتعل ہجوم نے کل علیم الدین اصغر نام کے ایک شخص کو بیف لے کر جانے کے شبہ میں پیٹ پیٹ کر مار ڈالا تھا۔ یہ واقعہ گئوركشا کے نام پر تشدد کے خلاف وزیر اعظم کے بیان کے باوجود ہوا۔ وزیر اعظم نے کل احمد آباد میں ایک پروگرام میں ناراضگی بھرے لہجے میں کہا تھا کہ گئوركشا کے نام پر کسی کے قتل کی اجازت نہیں دی جا سکتی۔ گایوں کے معاملے میں کون مجرم ہے اور کون نہیں اس کا فیصلہ قانون کرے گا۔ قانون کو اپنے ہاتھ میں لینے کا حق کسی کو نہیں ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز