اے ایم یو کے یونانی فیکلٹی کے شعبہ امراض جلد وتزینیات میں پوسٹ گریجویٹ کی شروعات جلد

سینٹر کونسل آف انڈین میڈیسن (سی سی آئی ایم ) نے امراض جلد میں پوسٹ گریجویٹ کو شروع کرنے کا منصوبہ بنا لیا ہے، جس کے تعلق سے نصاب کو تیار کرنے کا عمل شروع ہوگیا ہے۔

Oct 05, 2017 08:29 PM IST | Updated on: Oct 05, 2017 08:29 PM IST

علی گڑھ ۔ طب یونانی کی مسلسل بڑھتی ہوئی مقبولیت آج کسی سے پوشیدہ نہیں ہے ۔ ایسے میں یونانی فیکلٹی کے شعبہ امراض جلد وتزینیات میں پوسٹ گریجویٹ کی شروعات یقیناً طلباء کے لئے خوشی کی خبرہے ۔ سینٹر کونسل آف انڈین میڈیسن (سی سی آئی ایم ) نے امراض جلد میں پوسٹ گریجویٹ کو شروع کرنے کا منصوبہ بنا لیا ہے، جس کے تعلق سے نصاب کو تیار کرنے کا عمل شروع ہوگیا ہے۔ اسی تعلق سے آج علی گڑھ مسلم یونیورسٹی یونانی فیکلٹی کے شعبہ امراض جلد میں ایک ورکشاپ کا انعقاد کیا گیا، جس میں سی سی آئی ایم کے ذمہ داران کے ساتھ ملک بھر کے ماہرین نے شرکت کی۔

طب یونانی کے شعبہ امراض جلد کی مقبولیت آج دنیا بھر میں ہے۔  ایسے میں اس کو مزید مستحکم بنانے کے لئے مرکزی حکومت کی وزارتِ آیوش نے شعبہ امراض جلد میں پی جی کورس کی ضرورت کو محسوس کیا اور مسلم یونیورسٹی علی گڑھ کی زیر نگرانی ملک بھر کے ماہرین کو نصاب تیار کرنے کو کہا ہے۔ اس کے تعلق سے پہلا ورکشاپ مسلم یونیورسٹی میں منعقد کیا گیا ۔ مسلم یونیورسٹی کی ہی پروفیسر سی سی آئی ایم کی نائب صدر پروفیسر شگفتہ علیم نے بتایا کہ ہماری کوشش ہے کہ طب یونانی کے جن جن شعبہ جات میں پوسٹ گریجویٹ کورسیز نہیں ہیں، وہاں جلد ہی اسکی شروعات کی جائے تاکہ طب یونانی کے میدان میں طلباء مزید ترقی کریں ۔

اے ایم یو کے یونانی فیکلٹی کے شعبہ امراض جلد وتزینیات میں پوسٹ گریجویٹ کی شروعات جلد

امراض جلد کے ماہر ڈاکٹر ایم محسن نے کہا کہ ہر شعبہ میں پوسٹ گریجویشن کی اشد ضرورت ہے جو روزگار کے مواقع فراہم کرسکے۔ اب جبکہ وزارت آیوش نے اس بات کو محسوس کیا ہے کہ امراض جلد کا علاج یونانی طریقہ میں بہتر ہے تو اس کو مستحکم بنانے کی پیش رفت شروع کی گئی ہے۔ یقیناً اس سے طلباء کو اور مریضوں کو فائدہ ملے گا۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز