یوگی آدتیہ ناتھ نے گومتی ريور فرنٹ پروجیکٹ کی تحقیقات کا دیا حکم

Apr 01, 2017 07:28 PM IST | Updated on: Apr 01, 2017 07:29 PM IST

لکھنؤ ۔  اتر پردیش کے وزیر اعلی آدتیہ ناتھ یوگی نے اکھلیش یادو حکومت کے ڈریم پروجیکٹ گومتی ريور فرنٹ کی تعمیر میں مبینہ دھاندلی کی تحقیقات کا حکم دیا ہے۔ مسٹر یوگی نے گزشتہ 27 مارچ کو ہی گومتی ريور فرنٹ کا دورہ کیا تھا۔ اس دوران انہوں نے حکام سے پوچھا تھا کہ تین میٹر گہری اور دس کلومیٹر لمبی گومتی ندی کی کھدائی کی مٹی کہاں گئی۔ یہ منصوبہ اکھلیش یادو حکومت کے ڈریم پروجیکٹ میں شامل ہے، جوتقریبا تین ہزار کروڑ روپے کا پروجیکٹ ہے۔ ريور فرنٹ پروجیکٹ کی وجہ سے گومتی ندی پر بنا پل دو بار توڑا گيا۔ اس کی تعمیر کے وقت ہی دھاندلی کے الزام لگ رہے تھے۔ الزام تھا کہ اس میں زیادہ پیسہ خرچ کیا جا رہا ہے۔

وزیر اعلی نے 45 دنوں کے اندر تفتیش مکمل کرنے کے احکامات دیئے ہیں۔ اس سے پہلے وزیر اعلی نے پروجیکٹ کے بارے میں مکمل معلومات حاصل کیں، پروجیکٹ کا جائزہ لیا۔ اس کے بعد پارلیمانی امور کے وزیر سریش کھنہ اور طبی تعلیم کے وزیر آشوتوش اورٹنڈن نے بھی مذکورہ پروجیکٹ سے جڑے حکام کے ساتھ میٹنگ کی۔ جائزہ لینے کے بعد وزیر اعلی نے تحقیقات کا حکم دیا۔ الزام ہے کہ پروجیکٹ میں اصل قیمت سے زیادہ پیسے خرچ کئے گئے ہیں۔

یوگی آدتیہ ناتھ  نے گومتی ريور فرنٹ پروجیکٹ کی تحقیقات کا دیا حکم

یوگی آدتیہ ناتھ : فائل فوٹو

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز