کشمیر میں ضمنی انتخابات کے موقع پر زخمی ہونے والا ایک نوجوان چل بسا ، ہلاکتوں کی تعداد 9 ہوئی

Apr 19, 2017 10:45 PM IST | Updated on: Apr 19, 2017 10:45 PM IST

سری نگر: وسطی کشمیر کے ضلع گاندربل میں 9 اپریل کو سری نگر کی پارلیمانی نشست پر پولنگ کے دوران ہونے والی آزادی حامی جھڑپوں کے دوران زخمی ہونے والا ایک نوجوان زموں کی تاب نہ لاتے ہوئے اسپتال میں چل بسا ہے۔ نوجوان کی موت کے ساتھ سیکورٹی فورسز اور ریاستی پولیس کی کاروائی میں ہلاک ہونے والے نوجوانوں کی تعداد بڑھ کر 9 ہوگئی ہے۔ مظفر احمد میر ساکنہ زنگل پورہ ضلع کولگام 9 اپریل کو وسطی ضلع گاندربل کے بارسو میں سیکورٹی فورسز کی فائرنگ میں زخمی ہوا تھا۔

زخمی مظفر کو سری نگر کے شیر کشمیر انسٹی چیوٹ آف میڈیکل سائنسز (سکمز) میں داخل کرایا گیا تھا، جہاں اس نے بدھ کی صبح زندگی کی آخری سانسیں لیں۔ مظفر ضلع گاندربل میں سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں ہلاک ہونے والا دوسرا نوجوان ہے جبکہ 7 نوجوان ضلع بڈگام میں ہلاک کئے گئے تھے۔ سیکورٹی فورسز کی کاروائی میں قریب 150 دیگر شہری زخمی ہوگئے تھے۔

کشمیر میں ضمنی انتخابات کے موقع پر زخمی ہونے والا ایک نوجوان چل بسا ، ہلاکتوں کی تعداد 9 ہوئی

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز