بیٹے کے روسی وکیل سے ملنے میں کوئی برائی نہیں: ڈونالڈ ٹرمپ

Jul 13, 2017 03:39 PM IST | Updated on: Jul 13, 2017 03:39 PM IST

واشنگٹن۔ امریکہ کے صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے اپنے بیٹے ٹرمپ جونیئر کا دفاع کرتے ہوئے کہا کہ ان کے روس کی وکیل سے ملنے کے معاملے سے وہ بے خبر تھے لیکن اگر ایسا ہوا ہے تو اس میں کوئی برائی نہیں ہے۔ مسٹر ٹرمپ نے کہا،’’میرا خیال ہے کہ نو جون 2016کی میٹنگ میں کئی لوگ شامل رہے ہوں گے۔‘‘ انہوں نے کہا کہ اگر ان کے بیٹے نے روس کی وکیل نتالیا ویسلنی تسکایا کے ساتھ ملاقات کی تھی تو اس میں کوئی برائی نہیں ہے۔

نیو یارک ٹائمس نے اپنی ایک رپورٹ میں دعویٰ کیا ہے کہ ٹرمپ جونئر نے اپنے والد کی حریف ڈیموکریٹک امیدوار ہلیری کلنٹن کے بارے میں معلومات حاصل کرنے کےلئے نو جون 2016کو نیویارک کے ٹرمپ ٹاور میں روس کی ایک وکیل نتالیا ویسلنی تسکایا سے ملاقات کی تھی۔ مسٹر ٹرمپ نے اس سے پہلے اپنے بیٹے ٹرمپ جونئر کی تعریف کرتے ہوئے انہیں اچھا انسان بتایا تھا۔ انہوں نے کہا تھا کہ انہیں اپنے بیٹے کی ایمانداری پر ناز ہے۔ اخبارنے دعویٰ کیا ہے کہ ٹرمپ جونئر روس کی جس وکیل سے ملے،اس کا کریملن کے ساتھ رابطہ تھا۔ یہ وکیل ٹرمپ جونئر کو کچھ ایسی معلومات دینے والی تھی،جس سے انتخابات میں محترمہ ہلیری کو نقصان پہنچ سکتا تھا اور ان کی شبیہ خراب ہوسکتی تھی۔

بیٹے کے روسی وکیل سے ملنے میں کوئی برائی نہیں: ڈونالڈ ٹرمپ

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز