جادھو کی معافی کی عرضی پر کوئی حتمی فیصلہ نہیں : پاکستانی فوج

Jul 16, 2017 09:55 PM IST | Updated on: Jul 16, 2017 09:55 PM IST

اسلام آباد: پاکستان کی فوج نے آج کہا کہ جاسوسی کے الزام میں یہاں کی جیل میں بند ہندستانی شہری كلبھوش جادھو جنھیں پھانسی کی سزاسنائی گئی ہے ،انکی معافی کی عرضی پر ابھی کوئی حتمی فیصلہ نہیں کیا گیا ہے۔ محکمہ دفاع کے ایک جانچ گروپ نے ٹویٹ کیا کہ كلبھوش جادھو کی معافی کی عرضی پر ابھی کوئی فیصلہ نہیں کیا گیا ہے۔ فوج کے سربراہ جنرل قمر جاوید باجوا صورتحال کا جائزہ لے رہے ہیں۔

ذرائع کے مطابق آرمی چیف جادھو کے خلاف ثبوتوں کا تجزیہ کر رہے ہیں۔ انٹر سروس پبلک ریلیشنز (آئی ایس پی آر) کے ڈائریکٹر جنرل میجر جنرل آصف غفور کے مطابق جنرل باجوا جادھو کی طرف سے داخل کی گئی سابقہ اپیل پر حتمی فیصلہ کریں گے اور یہ فیصلہ ترجیحی بنیاد پر کیا جائے گا۔

جادھو کی معافی کی عرضی پر کوئی حتمی فیصلہ نہیں : پاکستانی فوج

آئی ایس پی آر کے ذرائع کے مطابق جادھو نے پاکستانی فوج کی اپیلی عدالت میں اپنی درخواست مسترد ہونے کے بعد جنرل باجوا کے سامنے معافی کی عرضی دی ہے۔ واضح ر ہے کہ ہندستانی بحریہ کے سابق افسر جادھو کو پاکستان کی فوجی عدالت نے پھانسی کی سزا سنائی ہے ، جس کے خلاف ہندستان کی اپیل پر بین الاقوامی عدالت انصاف نے روک لگا دی ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز