پاکستان میں مندر میں توڑ پھوڑ، توہین مذہب اور دہشت گردی کا معاملہ درج

اسلام آباد۔ پاکستان کے جنوبی صوبہ سندھ کے ایک ہندو مندر میں توڑ پھوڑ کی گئی۔

Apr 29, 2017 04:54 PM IST | Updated on: Apr 29, 2017 04:54 PM IST

اسلام آباد۔ پاکستان کے جنوبی صوبہ سندھ کے ایک ہندو مندر میں توڑ پھوڑ کی گئی۔ توڑ پھوڑ کرنے والوں نے مورتیوں کو توڑنے کے علاوہ اس کے کچھ ٹکڑے قریبی نالے میں بھی پھینک دیے۔ اس معاملہ میں ابتدائی انکوائری کی بنیاد پر تین نامعلوم افراد کے خلاف توہین مذہب اور دہشت گردی کا معاملہ درج کیا گیا ہے۔

مقامی پولیس کے مطابق، کچھ دیوتاؤں کی مورتیوں کو نقصان پہنچایا گیا اور کچھ کے ٹکڑے قریب کی سیویج لائن میں ملے ہیں۔ یہ واقعہ کل تھاٹا ضلع کے گارو شہر میں پیش آیا۔ ڈان کی خبر کے مطابق پولیس نے توہین مذہب اور دہشت گردی کا معاملہ درج کر لیا ہے۔ پولیس نے تین نامعلوم افراد کے خلاف بتوں کو نقصان پہنچانے کے سلسلے میں ایف آئی آر بھی درج کی ہے۔

پاکستان میں مندر میں توڑ پھوڑ، توہین مذہب اور دہشت گردی کا معاملہ درج

بی بی سی اردو نے پولیس افسر فدا حسین ماستوی کو یہ کہتے ہوئے حوالہ دیا ہے، 'تحقیقات جاری ہے لیکن ابھی تک کسی کو گرفتار نہیں کیا گیا ہے۔ خبر میں مقامی ہندو کونسلر لال مہیشوری نے بتایا، 'یہ ظاہر ہوتا ہے کہ کوئی رات کے ایک بجے سے صبح پانچ بجے کے درمیان میں مندر میں داخل ہوا تھا۔ جب صبح لوگ پوجا کرنے آئے تو مورتیاں غائب تھیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز