پاکستان نے امریکہ کے الزامات کی تردید کی

Oct 06, 2017 04:10 PM IST | Updated on: Oct 06, 2017 04:10 PM IST

واشنگٹن۔ پاکستان کے وزیر خارجہ خواجہ آصف نے امریکی حکام کے ان دعووں کو بے بنیاد قرار دیا ہے جن میں دہشت گردی سے لڑنے کے اس کے عزم پر سوالیہ نشان لگائے گئے ہیں۔ مسٹر  آصف ان دنوں امریکہ کے دورہ پر ہیں اور ان کے اس دورہ کے دوران امریکی حکام اور اراکین پارلیمنٹ نے پاکستان کی اس بات پر تنقید کی ہے کہ وہ دہشت گرد تنظیموں کے خلاف سخت کارروائی نہیں کررہا ہے۔ انہوں نے نامہ نگار وں سے کہا کہ آپ چاہتے ہیں کہ ہم ان کا پتہ لگائیں تو ہم اس کام کوکریں گے۔ آپ ان کے خلاف کارروائی چاہتے ہیں تو ہم وہ بھی کریں گے لیکن اس طرح کے بے بنیاد الزام ہمیں قطعی منظور نہیں ہیں۔

پاکستان کے وزیر خارجہ مسٹر آصف نے کہا کہ ہم یہ نہیں کہہ رہے ہیں کہ ہم بالکل سادھو سنت ہیں ۔ ہوسکتا ہے کہ ہم سے پہلے کوئی غلطی ہوگئی ہو لیکن گزشتہ چار برسوں میں ہم پوری محنت اور عزم کے ساتھ دہشت گردوں کے خلاف کارروائی کررہے ہیں۔ گزشتہ کچھ برسوں میں طالبان پر ہمارا اثر کم ہوا ہے اور اسی وجہ سے افغانستان میں جنگ کو ختم کرنے سے متعلق کوئی بھی امن مذاکرات متاثر ہوسکتے ہیں۔ خیال رہے کہ اس ہفتہ کے شروع میں امریکی وزیر دفاع جم میٹس نے کہا تھا کہ پاکستان کی عادتوں میں ضروری تبدیلی لانے کے لئے صدر ڈونالڈ ٹرمپ اس سے پہلے کوئی بڑا قدم اٹھائیں ہم افغانستان میں امریکہ کے ساتھ مل کر کام کرنے کے لئے اسے کچھ وقت دینا چاہیں گے۔

پاکستان نے امریکہ کے الزامات کی تردید کی

پاکستان کے وزیر خارجہ خواجہ محمد آصف: فائل فوٹو۔

گزشتہ منگل کو ایک اعلی فوجی جنرل نے کہا تھا کہ ان کا خیال ہے کہ پاکستان کی خفیہ ایجنسی آئی ایس آئی کا دہشت گرد انہ گروپوں سے تعلق ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز