مالی حکومت سے اسلامی تنظیموں سے گفت و شنید کی اپیل

Apr 03, 2017 03:01 PM IST | Updated on: Apr 03, 2017 03:01 PM IST

بماکو۔ صدر ابراہیم ابو بکر کیتا کی صدارت میں یہاں جاری امن مذاکرات میں اس بات پر زور دیا گیا کہ مالی حکومت کو یہاں امن بحال کرنے کیلئے سرگرم دو اسلامی گروپوں کے سربراہوں سے بات چیت کرنی چاہئے۔ ایک ہفتہ کی مدت کے اس اجلاس میں کل میسینا لبریشن فرنٹ کے سربراہ عماد کوف اور انصار الدین کے سربراہ ایاد الغزالی سے بات چیت کرنے کی درخواست کی گئی۔ ان دونوں اسلامی گروپوں کا مالی اور فرانس کے سپاہیوں اور اقوام متحدہ کے امن سفیروں پر مسلسل کئے گئے جان لیوا حملوں میں ہاتھ رہا ہے۔

انصار الدین نے جنوری میں شمالی مالی میں ایک فوجی کیمپ میں کئے گئے خودکش حملوں  ‎ انتہا پسند تنظیم سے منسلک ہونے کا دعوی کیا تھا۔ اس حملے میں 60 افراد کی موت ہوگئی تھی۔

مالی حکومت سے اسلامی تنظیموں سے گفت و شنید کی اپیل

تصویر: یو این آئی

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز