سکم میں تنازع کے باوجود وزیر اعظم مودی اور شی جن پنگ نے ملائے ہاتھ ، کئی امور پر ہوئی بات چیت

Jul 07, 2017 07:00 PM IST | Updated on: Jul 07, 2017 07:00 PM IST

ہیمبرگ: وزیر اعظم نریندر مودی اور چین کے صدر شی جن پنگ نے آج یہاں برکس ممالک کی غیر رسمی ملاقات کے دوران ایک دوسرے سے گرم جوشی سے ملاقات کی اور مختلف مسائل پر بات چیت کی۔ وزارت خارجہ کے ترجمان گوپال باگلے نے ٹویٹ کیا، "چین کی جانب سے منعقد برکس لیڈروں کے غیر رسمی اجلاس میں مسٹر مودی اور مسٹر جن پنگ کے درمیان کئی امور پر بات چیت ہوئی۔ "لیکن انہوں نے بات چیت کی کوئی تفصیلات نہیں دی۔

دونوں ممالک کے درمیان سکم رینج پرجاری کشیدگی کے پیش نظر دونوں رہنماؤں کے درمیان اس بات چیت کو اہم سمجھا جا رہا ہے۔ دونوں رہنماؤں نے برکس ممالک کی غیر رسمی ملاقات میں اپنے بیانات میں ایک دوسرے کے سلسلے میں مثبت تبصرے کرکے ماحول کو خوشگوار بنادیا۔ اجلاس ختم ہونے پر جب تمام رہنما اٹھے تو مسٹر مودی اور برکس کے موجودہ صدر اورچینی صدر کا ایک دوسرے سے سامنا ہوا۔ دونوں رہنماؤں نے مسکراہٹ کے ساتھ گرمجوشی سے ہاتھ ملایا اور دونوں کے درمیان کچھ دیر علیحدہ بات چیت بھی ہوئی۔ قومی سلامتی کے مشیر اجیت ڈوبھال بھی وزیر اعظم کے ساتھ موجود تھے۔

سکم میں تنازع کے باوجود وزیر اعظم مودی اور شی جن پنگ نے ملائے ہاتھ ، کئی امور پر ہوئی بات چیت

مسٹر مودی نے اپنے بیان کے شروع میں ہی کہا کہ سب سے پہلے صدر شی جن پنگ کا استقبال کرتے ہوئے اس اجلاس کی میزبانی کرنے کے لئے شکریہ۔ اس کے بعد انہوں نے دہشت گردی، مغربی ایشیا، شمالی کوریا کے ساتھ کشیدگی وغیرہ کا ذکر کرنے کے ساتھ ہی عالمی اقتصادی ترقی کی شرح کو بہتر بنانے پر اطمینان کا اظہار کیا۔ انہوں نے ہندوستان میں اس سال 7 فیصد سے زیادہ ترقی کی شرح کا امکان ظاہر کرتے ہوئے گڈس اینڈ سروس ٹیکس (جی ایس ٹی) کے لاگو ہونے کا بھی ذکر کیا اور کہا کہ اس سے 1.3 ارب لوگوں کا مربوط بازار بنے گا۔

مسٹر مودی نے تحفظ پسندانہ اقتصادی پالیسیوں کے خلاف آواز بلند کی اور پیرس معاہدے كونافذ کرنے اور دہشت گردی کے خلاف عالمی کارروائی میں برکس کی قیادت پر زور دیا۔ انہوں نے برکس ریٹنگ ایجنسی کا قیام کرنے اور بین الاقوامی مالیاتی اداروں کی طرف سے متوازن رویے پر بھی زور دیا۔ مسٹر مودی نے کہا کہ چینی صدر شی جن پنگ کی صدارت میں برکس کی مثبت پیش رفت نے ہمارے باہمی تعاون کو اور بھی گہرا کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آخر میں میں صدر شی جن پنگ کو آئندہ نویں برکس سربراہی اجلاس کے لئے نیک خواہشات پیش کرتے ہوئے ان کی مکمل حمایت کرتا ہوں۔

چینی صدر نے اپنے بیان میں دہشت گردی کے خلاف ہندوستان کے عزم اور اس کے صدارتی دور میں تنظیم کی کارگزاریوں کی تعریف کی۔ انہوں نے گزشتہ سال گوا میں برکس اجلاس کے نتائج کا بھی ذکر کیا۔ چینی صدر نے اقتصادی اور سماجی ترقی میں ہندوستان کی کامیابی کی تعریف کی اور مستقبل میں تیز رفتار ترقی کی خواہش کا اظہار کیا۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز