فلسطین : غزہ، غرب اردن اور القدس بدستور میدان جنگ ، خواتین اور بچوں سمیت 6 افراد جاں بحق ، 231 زخمی

Dec 10, 2017 02:14 PM IST | Updated on: Dec 10, 2017 02:14 PM IST

غزہ : مقبوضہ بیت المقدس کو صہیونی ریاست کا دارالحکومت بنائے جانے کے غیرآئینی اقدام کے خلاف فلسطین بھر میں احتجاج جاری ہے۔بیت المقدس، مقبوضہ مغربی کنارے اور غزہ کی پٹی میں ہزاروں فلسطینی شہری سڑکوں سراپا احتجاج ہیں۔ مشتعل مظاہرین اور اسرائیلی فوج کےدرمیان کئی مقامات پر جھڑپیں ہوئیں۔ قابض فوجیوں نے نہتے فلسطینی مظاہرین کو منتشرکرنے کے لیے طاقت کے وحشیانہ حربے استعمال کیے جس کے نتیجے میں خواتین اور بچوں سمیت اب تک چھ افراد شہید جبکہ 231 سے زائد فلسطینی زخمی ہوگئے ہیں۔

مرکز اطلاعات فلسطین کے مطابق ہلال احمر فلسطین کی جانب سے جاری کردہ ایک بیان میں بتایا گیا ہےکہ انتفاضہ آزادی القدس کےدوران گذشتہ روز غرب اردن، غزہ اور القدس میں 231 فلسطینی زخمی ہوئے۔ ان میں سے 171 غرب اردن اور القدس میں زخمی ہوئے جب کہ 60 فلسطینی غزہ کی پٹی میں اسرائیلی فوج کی فائرنگ سے زخمی ہوئے۔بیت المقدس میں اسرائیلی فوج کی براہ راست فائرنگ سے 12 فلسطینی زخمی ہوئے جبکہ ربڑ کی گولیوں سے 24 اور آنسوگیس کی شیلنگ سے 172 فلسطینی متاثر ہوئے ہیں۔

فلسطین : غزہ، غرب اردن اور القدس بدستور میدان جنگ ، خواتین اور بچوں سمیت 6 افراد جاں بحق ، 231 زخمی

بیت المقدس، مقبوضہ مغربی کنارے اور غزہ کی پٹی میں ہزاروں فلسطینی شہری سڑکوں پرسراپا احتجاج ہیں۔ فائل فوٹو

مقبوضہ مغربی کنارے میں فلسطینی آبادیوں اور یہودی کالونیوں کو ملانے والے نقاط تماس پر فلسطینیوں اور اسرائیلی فوج میں جھڑپیں ہوئیں۔نابلس شہر میں اسرائیلی فوج کی کارروائیوں کے دوران حورہ کیمپ کےقریب ایک فلسطینی صحافی سمیت کئی شہری زخمی ہوگئے۔عینی شاہدین نے بتایا کہ اسرائیلی فوج کی فائرنگ سے زخمی ہونےوالے صحافی کو علاج کے لیےرفیدیا اسپتال منتقل کیا گیا ہے۔ اسے اس وقت نشانہ بنایا گیا جب وہ مظاہروں  اور اسرائیلی فوج کے وحشیانہ تشدد کی کوریج کررہا تھا۔ فلسطینیوں کے احتجاج اور اسرائیلی فوج کے تشدد کے باعث عورتا کے علاقے میں کئی گھنٹے ٹریفک جام رہی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز