روبوٹ کو شہریت دینے والا پہلا ملک بنا سعودی عرب ، ملئے صوفیہ سے ؟

Oct 27, 2017 04:37 PM IST | Updated on: Oct 27, 2017 04:37 PM IST

دبئی : تیزی کے ساتھ معاشی انقلاب میں ترقی کی طرف گامزن سعودی عرب میں پہلی بار ایک روبوٹ کو مملکت کی شہریت دی گئی ہےاور اس طرح سعودی عرب انسانوں کے ساتھ روبوٹ کو بھی شہریت دینے والا والا دنیا کا پہلا ملک بن گیا ہے ۔ العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق سعودی دارالحکومت الریاض میں منعقدہ ’فیوچر انویسٹمنٹ انیشی ایٹیو‘ کانفرنس کے دوران سعودی شہریت حاصل کرنے والے روبوٹ ’صوفیا‘ کے ساتھ مختصر مکالمہ بھی کیا گیا۔

اس دلچسپ مکالمے پر مشتمل ایک مختصر فوٹیج سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی۔ کانفرنس کے میزبان نے نئے ’نیوم‘ سٹی میں روبوٹ کے کردار کے بارے میں ’صوفیا‘ سے بات چیت کی گئی۔ اس موقع پر میزبان نے کہا کہ میری معلومات کے مطابق آپ پہلا روبوٹ ہیں جنہیں سعودی شہریت دی گئی ہے تو اس پر ’صوفیا‘ روبوٹ مسکرایا اور کہا کہ ’مجھے اس پر فخر ہے اور یہ بلا شبہ ایک تاریخی اقدام ہے‘۔

روبوٹ کو شہریت دینے والا پہلا ملک بنا سعودی عرب ، ملئے صوفیہ سے ؟

بتایا جاتا ہے کہ ’صوفیا‘ ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کے ’نیوم‘ سٹی پروجیکٹ کے مستقبل کا ایک علامتی اشارہ ہے۔ توقع ہے کہ اس شہر کے قیام اور اس کی تعمیر وترقی میں روبوٹ ٹیکنالوجی کا کا کلیدی کردار ہوگا۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز