بنگلہ دیش میں پناہ گزینوں کی کشتی حادثے کا شکار، 12افراد کی موت

Oct 09, 2017 09:06 AM IST | Updated on: Oct 09, 2017 12:19 PM IST

کاکس بازار۔ میانمار سے اپنی جان بچا کر فرار ہونے والے پناہ گزینوں کی کشتی حادثے کا شکار ہونے سے آج کم از کم 12 افراد ہلاک ہوگئے جن میں زیادہ تر بچے شامل ہیں۔ بنگلہ دیش کے بارڈر گارڈ کےکمانڈر کرنل عریف الاسلام نے کہا کہ کشتی جنوبی بنگلہ دیش کے شاہ پیریر جزیرہ کے قریب حادثے کا شکار ہوگئی۔ انہوں نے کہا کہ 12 لاشوں کو پانی سے نکالا گیا ہے جبکہ 8 افراد کو بچانے میں کامیابی حاصل ہوئی ہے۔

انہوں نے کہا کہ اب تک 10بچوں ، ایک خاتون سمیت 12لاشیں نکالی جا چکی ہیں۔ ریلیف اور بچاؤ کا کام جاری  ہے۔ انہوں نے کہا کہ کشتی پر کتنے افراد سوار تھے اس کا پتہ ابھی نہیں چل پایا ہے ۔ اقوام متحدہ نے میانمار کے تشدد کو "نسلی قتل عام" قرار دیا ہے۔ اس سے قبل، 28 ستمبر کو تقریبا 80 پناہ گزینوں کو لے کر جا رہی ایک کشتی حادثے کا شکار ہوگئی جس میں 23 افراد ہلاک کی موت ہوگئی تھی جبکہ 17 لوگوں کو بچایا جا سکا تھا اور بقیہ کے لاپتہ ہونے کا اعلان کر دیا گیا تھا۔ 25 اگست کے بعد سے اب تک تقریبا 5 لاکھ روہنگیا مسلمان میانمار سے فرارہوکر بنگلہ دیش میں داخل ہو چکے ہیں۔

بنگلہ دیش میں پناہ گزینوں کی کشتی حادثے کا شکار، 12افراد کی موت

اس فائل فوٹو میں بنگلہ دیش کے تیکناف میں ناف ندی کے ذریعہ سرحد پار کرتے ہوئے روہنگیا پناہ گزینوں کو دیکھا جا سکتا ہے۔ رائٹرز۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز