بدعنوانی کے الزام میں گرفتار سعودی شہزادہ متعب بن عبداللہ رہا

ریاض۔ تین ہفتہ قبل بدعنوانی کے الزام میں گرفتار کئے گئے سعودی عرب کے با اثر شہزادہ متعب بن عبداللہ کو رہا کر دیا گیا ہے۔

Nov 29, 2017 03:43 PM IST | Updated on: Nov 29, 2017 03:44 PM IST

ریاض۔ تین ہفتہ قبل بدعنوانی کے الزام میں گرفتار کئے گئے سعودی عرب کے با اثر شہزادہ متعب بن عبداللہ کو رہا کر دیا گیا ہے۔ نیشنل گارڈ کے سابق سربراہ شہزادہ متعب ان 200 اہم سیاسی اور کاروباری شخصیات میں سے ایک ہیں جنھیں چار نومبر کو گرفتار کر لیا گیا تھا۔ ایک وقت میں سعودی کے تخت تک پہنچنے کی دوڑ میں شامل شہزادہ متعب گرفتار کیے گئے افراد میں سب سے زیادہ سیاسی طاقت رکھنے والے شہزادے تھے۔

ذرائع کے مطابق،  اب انھوں نے اپنی رہائی کے لیے ایک ارب ڈالر کا معاہدہ کیا ہے۔ شہزادہ متعب کے علاوہ تین اور افراد کی رہائی کے لئے حکومت کے ساتھ شرائط طے پا گئی ہیں۔خیال رہے کہ چونسٹھ سالہ شہزادہ متعب سابق فرمانروا شاہ عبداللہ کے بیٹے اور ولی عہد محمد بن سلمان کے کزن ہیں اور گرفتاری سے تھوڑی دیر پہلے ہی انہیں نیشنل گارڈ کے سربراہ کے عہدہ سے ہٹا دیا گیا تھا۔

بدعنوانی کے الزام میں گرفتار سعودی شہزادہ متعب بن عبداللہ رہا

سعودی عرب کے شہزادہ متعب بن عبداللہ: فائل فوٹو، رائٹرز۔

غور طلب ہے کہ سعودی عرب میں نئی انسداد بدعنوانی کمیٹی نے 11 شہزادوں، چار موجودہ اور ’درجنوں‘ سابق وزرا کو گرفتار کر لیا گیا تھا۔ گرفتار ہونے والوں میں معروف سعودی کاروباری شخصیت شہزادہ الولید بن طلال بھی شامل ہیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز