سعودی خواتین کو کار چلانے کی اجازت اقتصادی اصلاحات کا حصہ: خالد بن سلمان

Sep 27, 2017 11:53 AM IST | Updated on: Sep 27, 2017 11:53 AM IST

واشنگٹن۔ امریکہ میں سعودی عرب کے سفیر پرنس خالد بن سلمان بن عبدالعزیز نے کہا کہ ان کے ملک میں خواتین کو کار چلانے کی اجازت دینے کا اعلان اقتصادی اصلاحات کا حصہ ہے۔ خالد بن سلمان نے کل صحافیوں سے کہا ’’ اس اعلان کے بعد خواتین کو کار چلانے کی اجازت ہوگی ۔ یہ فیصلہ صرف ایک اہم سماجی تبدیلی نہیں بلکہ ملک کی اقتصادی اصلاحات کا حصہ ہے‘‘۔

شہزادہ عبدالعزيز نے کہا، ’’مجھے لگتا ہے کہ ہماری قیادت سمجھتی ہے کہ معاشرہ اس کے لئے تیار ہے‘‘۔ سعودی عرب کے حکمراں سلمان بن عبدالعزیز السعود نے ملک میں خواتین کو گاڑی ڈرائیو کرنے کی اجازت دینے کا اعلان کیا ہے۔ شاہی حکم میں وزارتی سطح کی کمیٹی تشکیل کرنے لے لئے کہا گیا ہے جو 30 دن کے اندر تجویز پیش کرے گی اور جون 2018 تک اس حکم کو پاس کیا جائے گا۔

سعودی خواتین کو کار چلانے کی اجازت اقتصادی اصلاحات کا حصہ: خالد بن سلمان

واضح رہے کہ سعودی عرب واحد ایسا ملک ہے جہاں خواتین کی ڈرائیونگ ممنوع ہے۔ : فائل فوٹو، رائٹرز۔

واضح رہے کہ سعودی عرب واحد ایسا ملک ہے جہاں خواتین کی ڈرائیونگ ممنوع ہے۔ خواتین کو ان کا حق دلانے کے لئے کئی سال تک مہم چلائی گئی، بہت سی خواتین کو اس پابندی کو توڑنے کے لئے سزا بھی دی گئی ہے۔ امریکی وزارت خارجہ نے اس کا استقبال کرتے ہوئے اسے صحیح سمت میں اٹھایا گیا ایک قدم بتایا ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز