بی جے پی ایم پی اننت کمار ہیگڑے پر اسپتال میں ڈاکٹروں سے مارپیٹ کرنے کا الزام

Jan 03, 2017 05:42 PM IST | Updated on: Jan 03, 2017 05:42 PM IST

بھٹکل۔ عوام کی نمائندگی کرنے والے اور ان کے لیے تمام سہولیات مہیا کرانے کا دعویٰ کرنے والوں کا جب عام آدمی جیسے  حالات سے  سامنا ہوتا ہے تو ان کو حقیقت معلوم ہوتی ہے۔ کچھ ایسا ہی بی جے پی کے ممبر پارلیمنٹ اننت کمار ہیگڑے  کے ساتھ ہوا جب وہ اپنی والدہ کو علاج کے لیے ساتھ لیکر ہاسپیٹل پہنچے۔ ہاسپیٹل میں جب ان کی والدہ کو  ذرا خاص توجہ نہیں دی گئی تو ان کے غصہ کی انتہا نہ رہی۔ الزام ہے کہ وہ وہاں موجود  ڈاکٹر اوراسٹاف پر حملہ کر بیٹھے۔  کرناٹک کے ضلع اتر کنڑا سے بی جے پی ایم پی اننت کمار ہیگڑے پر الزام ہے کہ  وہ اپنی والدہ کےعلاج کے لیے ہاسپٹل پہنچے۔  وہاں صحیح دیکھ بھال نہ کرنےکا الزام لگا کر انہوں نے  ہاسپٹل اسٹاف  کے ساتھ بد سلوکی کی ۔ یہ واقعہ کل دیر رات  سر سی کے ایس ایس ٹی ہاسپٹل میں پیش آیا ۔

وہیں ایم پی نے ڈاکٹر پراپنی والدہ کے علاج میں غفلت برتنے کا الزام لگایا ہے۔ بی جے پی  ایم پی کے حملے میں ڈاکٹروں کو  چوٹیں  آئی ہیں ۔ماردھاڑ کا پورا معاملہ سی سی ٹی وی کیمرے میں قید ہوا ہے مگر اس معاملہ میں اب تک پولیس میں شکایت درج ہونے کی کوئی اطلاع نہیں ملی ہے ۔

بی جے پی ایم پی اننت کمار ہیگڑے پر اسپتال میں ڈاکٹروں سے مارپیٹ کرنے کا الزام

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز