کیرالہ : گائے کو ذبح کرنے کے الزام میں یوتھ کانگریس لیڈر اور سات دیگر گرفتار

Jun 01, 2017 06:51 PM IST | Updated on: Jun 01, 2017 06:51 PM IST

کنور : یوتھ کانگریس کی کیرالہ یونٹ کے صدر رجل مکٹی اور سات دیگر کو عوامی طور پر گائے ذبح کرکے اس کاگوشت کارکنوں میں بانٹنے کے الزام میں گرفتار کیا گیا ہے۔ ملک میں ذبح کے لئے مویشیوں کی خرید و فروخت پر روک لگانے کے تعلق سے مرکز کے نوٹیفکیشن کے خلاف یوتھ کانگریس نے مظاہرے کے دوران کھلے عام ایک گائے ذبح کرکے اس کا گوشت کارکنوں میں تقسیم کیا تھا۔ ان لوگوں کو جانوروں پر ظلم سے متعلق ایکٹ کے تحت گرفتار کیا گیا ہے۔ اس دفعہ کے تحت ان لوگوں کو ایک سال کی جیل ہو سکتی ہے۔

بھارتیہ جنتا یوا مورچہ کے کارکنوں کی شکایت کے بعد ان لوگوں کو سٹی پولیس تھانہ میں بلایا گیا اور گرفتار کر لیا گیا۔ کیرالہ ریاستی کانگریس کمیٹی کے صدر ایم ایم حسن نے مسٹر مکٹی اور دو دیگر یوتھ کانگریس لیڈر، جوسے کنداتھل اور شراف الدین کو پہلے ہی پارٹی سے معطل کر دیا تھا۔

کیرالہ : گائے کو ذبح کرنے کے الزام میں یوتھ کانگریس لیڈر اور سات دیگر گرفتار

file photo

گرفتار کئے گئے لوگوں کو بعد میں ضمانت پر چھوڑ دیا گیا۔ کانگریس نائب صدر راہل گاندھی نے اس واقعہ کی سخت مذمت کرتے ہوئے کہا تھا کہ یہ غیرمہذب اوروحشیانہ کارروائی ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز