عازمین حج کی کسٹم اور امیگریشن کلیئرنس کا عمل حج کیمپ میں ہی کیا جائے: آرروشن بیگ

Aug 08, 2017 05:59 PM IST | Updated on: Aug 08, 2017 05:59 PM IST

بنگلورو۔ مرکزی حکومت نے اس سال سے سوئے حرم روانہ ہونے والے تمام عازمین کے کسٹم کی جانچ اور امیگریشن کلرینس کی کارروائی حج کیمپ کی بجائے ایئرپورٹ میں مکمل کرنے کی ہدایت دی ہے ـ ریاستی وزیرشہری ترقیات و حج آر روشن بیگ نے مرکزی حکومت کے اس فیصلہ کی سخت مذمت کی ہے ـ انہوں نے وزیر اعلیٰ سدرامیا سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ اس معاملہ میں مرکزی وزیر ارون جیٹلی سے بات کرکے کسٹم کی جانچ اور امیگریشن کلیرنس کا نظام حج کیمپ میں ہی بحال کرنے کی درخواست کریں ـ

 روشن بیگ نے کہا کہ گزشتہ 21 سالوں سے حج کیمپ میں ہی عازمین کے امیگریشن اور کسٹمز کلیئرنس کا سلسلہ چلا آ رہا ہے ـ مرکزی حکومت کے اچانک فیصلہ سے عازمین کو پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑے گا ـ اس موقع پر وزیراعلیٰ سدرامیا نے آر روشن بیگ کو یقین دلاتے ہوئے کہا کہ وہ بہت جلد مرکزی حکومت کو ایک مکتوب روانہ کریں گے جس میں کسٹم کی جانچ اور امیگریشن کلیرنس کے نظام کو بحال کرنے کی اپیل کریں گے ـ عازمین میں سے بھی کافی کا کہنا ہے کہ وہ اس سے پہلے کبھی ہوائی سفر پر نہیں گئے، اس لیے یہ کسٹم اور امیگریشن کلیئرنس کے بارے میں ہم نہیں جانتے۔ ایئر پورٹ کے باہر کیمپ میں تو کم سے کم وہ کسی دوسرے کی مدد بھی لے لیں گے، جو ان کو ایئر پورٹ پر شاید نہیں مل پائیگی ۔

عازمین حج کی کسٹم  اور امیگریشن کلیئرنس کا عمل حج کیمپ میں ہی کیا جائے: آرروشن بیگ

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز