تمل ناڈو : پلانی سوامی نے 122 ووٹوں کے ساتھ جیتا فلورٹیسٹ ، ڈی ایم کے ممبران اسمبلی کو باہر لے جانے کے بعد ہوئی ووٹنگ

Feb 18, 2017 08:49 AM IST | Updated on: Feb 18, 2017 03:53 PM IST

چنئی : تمل ناڈو اسمبلی کے خصوصی اجلاس میں وزیر اعلی پلانی سوامی نے اعتماد کا ووٹ جیت لیا ہے ۔ ڈی ایم کے کے اراکین اسمبلی کو ایوان سے باہر نکالے جانے کے بعد ووٹنگ ہوئی ، جس میں سوامی کی حمایت میں 122 ووٹ پڑے ۔ اس سے قبل  اس دوران ڈی ایم کے کے اراکین اسمبلی نے زور دار ہنگامہ کیا اور انہوں نے پنيرسیلوم کی حمایت میں جم کر نعرے بازی کی ۔انہوں نے اسپیکر کے سامنےو الی ٹیبل اور کرسیاں بھی توڑ ڈالی ۔ مائیکرو فون بھی پھنیک دئے ۔ ہنگامہ کے پیش نظر اسمبلی کی کارروائی کو ایک بجے تک کیلئے ملتوی کردیا گیا ہے۔

اس سے قبل اسمبلی اسپیکر نے ڈی ایم کے اور پنيرسیلوم کے حامیوں کی خفیہ ووٹنگ کا مطالبہ مسترد کر دیا۔ مانا جا رہا ہے کہ آخری منٹ پر کوئی بڑا الٹ پھیر نہ ہو ا، تو پلانی سوامی اعتماد کا ووٹ حاصل کر لیں گے۔ تمل ناڈو کی سیاست میں 29 سال بعد کوئی وزیر اعلی اسمبلی میں فلور ٹیسٹ کا سامنا کر رہے ہیں۔

تمل ناڈو : پلانی سوامی نے 122 ووٹوں کے ساتھ جیتا فلورٹیسٹ ، ڈی ایم کے ممبران اسمبلی کو باہر لے جانے کے بعد ہوئی ووٹنگ

پلانی سوامی کو لگا جھٹکا

ویسے مخالفین کے ذریعہ مشکل کھڑی کئے جانے سے پہلے اپنے ہی پلانی سوامي کی مشکلات میں اضافہ کر سکتے ہیں۔ اعتماد کے ووٹ کے موقع پر پلانی سوامی گروپ کو اس وقت بڑا جھٹکا لگا جب ممبر اسمبلی اور ریاست کے سابق ڈی جی پی آر نٹراج نے کہا کہ وہ پلانی سوامی کے اعتماد کی تجویز کے خلاف ووٹ دیں گے۔

inside-TN-assembly

نٹراج کے اس قدم سے 234 ارکان والی اسمبلی میں پلانی سوامی کے مبینہ حامی ممبران اسمبلی کی تعداد کم ہو کر 123 رہ گئی ہے۔ انا ڈی ایم کے نے سینئر پارٹی لیڈر كے اے سینگوٹاين کو ایوان میں پارٹی کا لیڈر منتخب کیا ہے۔

ڈی ایم کے اور کانگریس نے کھولے پتے

ڈی ایم کے کے ایگزیکٹو صدر ایم کے اسٹالن نے کہا کہ ان کی پارٹی پلانی سوامی حکومت کے اعتماد کے ووٹ کے خلاف ووٹ کرے گی۔ وہیں، کانگریس نے بھی اعتماد کے ووٹ کے خلاف ہی ووٹنگ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

ماياپور ممبر اسمبلی نٹراج نے کہا، 'میں پلانی سوامی حکومت کے اعتماد کے ووٹ کی تجویز کے خلاف ووٹ کرنے کے لئے مجبور ہوں۔ میں نے اپنے اسمبلی حلقہ میں لوگوں سے بات کی اور ان میں سے زیادہ تر کی رائے ہے کہ پنيرسیلوم کی حکومت کو بنے رہنا چاہئے۔ مجھے اسمبلی کے لوگوں کی رائے کو اسمبلی میں عکاسی کرنا پڑے گی۔'

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز