مجلس اتحاد المسلمین کے لیڈر اکبر الدین اویسی پر قاتلانہ حملہ کے معاملہ میں چار افراد قصوروار قرار ، 10 بری

Jun 29, 2017 06:37 PM IST | Updated on: Jun 29, 2017 06:37 PM IST

حیدرآباد: نامپلی کی میٹروپولیٹن کریمنل کورٹ نے تلنگانہ اسمبلی میں مجلس کے فلور لیڈر اکبرالدین اویسی پر 2011میں کئے گئے قاتلانہ حملہ کے معاملہ میں چار افراد کو مجرم قراردیا اور دیگر دس بشمول محمد پہلوان کو بری قراردیا۔جج نے حسن،عبداللہ یافعی،عود یافعی اور سالم کو مجرم قراردیا اور ان کو دس سال کی سزا سنائی۔

عدالت نے اس معاملہ میں 83گواہوں بشمول مجلس کے دو ارکان اسمبلی اکبرالدین اویسی ، احمد بلعلہ ،مجلس کے بعض کارپوریٹرس اور پارٹی کارکنوں سے جرح کی ۔30اپریل 2011کو اکبر اویسی پر بارکس علاقہ میں یہ حملہ کیا گیا تھا۔ بعد ازاں ملزمین کو گرفتار کیا گیا تھا۔

مجلس اتحاد المسلمین کے لیڈر اکبر الدین اویسی پر قاتلانہ حملہ کے معاملہ میں چار افراد قصوروار قرار ، 10 بری

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز