ملک اور بیرونی ممالک میں بڑھتی مانگ کو دیکھ کر کسان شہد کی کاشت پر دے رہے ہیں توجہ

کاشتکاروں کا کہنا ہےکہ شہد تیار کرنےکے لیے زیادہ سرمایہ لگانے کی ضرورت نہیں ہےـ

Feb 01, 2017 12:29 PM IST | Updated on: Feb 01, 2017 12:29 PM IST

بنگلورو /  پُتّور  ۔ شہد ایک ایسی چیز ہے جسے دوا کے طور پر بھی استعمال کیا جاتا ہے ـ نہ صرف ہندوستان بلکہ بیرون ملک میں بھی شہد کی مانگ ہے ـ  شہد کی اس بڑھتی ہوئی مانگ کو دیکھتے ہوئے کسانوں نے شہد کی کاشتکاری پر زیادہ توجہ دینا شروع کردیا ہے ـ شہد کی مکھیوں میں بھی کئی اقسام ہیں، جن سے شہد تیار کیا جاتا ہےـ کسان زیادہ ترلکڑی پیٹی میں شہد کی مکھیوں کو اکٹھا کرکے اس کی پرورش کرتے ہیں۔ اس کے بعد ان مکھیوں سے شہد تیار کیا جاتا ہےـ

کاشتکاروں کا کہنا ہےکہ شہد تیار کرنےکے لیے زیادہ سرمایہ لگانے کی ضرورت نہیں ہےـ شہد کی مکھیوں کو اکھٹا کرنے اور انہیں پرورش کرنے کے لیے پیٹی اور شہد تیار کرنے کے لیے چند آلات استعمال کئے جاتے ہیں ـ صرف ان دونوں چیزوں کے لیے رقم خرچ کرنی پڑے گی ـ ایک پیٹی کی قیمت تقریباً 800 روپیوں سے1000 روپئے ہے ـ اسی طرح شہد نکالنے کے لیے استعمال کیے جانے والے آلے کی قیمت تقریباً دو ہزار روپئے ہے ـ کسی بھی جگہ پرشہد کی  مکھیوں کی پرورش کی جاسکتی ہے ـ گھروں میں 20 تا 30 پیٹیوں میں شہد کی مکھیوں کی پرورش کرسکتے ہیں ـ ایسا کرنے کی صورت میں فی پیٹی سے 50 لیٹر شہد تیار کیا جاسکتا ہے ـ منگلور ضلع کے پُتّور کے رہنے والے کمار پینارجے نامی کاشتکار نے اپنی رہائش گاہ کے باہر شہد کی کاشتکاری شروع کی ہے ـ  انہوں نے بتایا کہ نومبر کے مہینہ میں شہد نکالا جاسکتا ہے ـ اس کے بعد جنوری سے مئی تک شہد کی مکھیوں کو چھتے سے جُدا کرکے شہد نکال سکتے ہیں ـ اس کے علاوہ ہفتہ میں ایک مرتبہ شہد نکالا جاسکتا ہے ـ خواتین اور بچے بھی اس کاشتکاری میں مدد کرسکتے ہیں ـ اس سے بچوں کو جانکاری حاصل کرنے میں بھی آسانی ہوگی ـ

ملک اور بیرونی ممالک میں بڑھتی مانگ کو دیکھ  کر کسان شہد کی کاشت پر دے رہے ہیں توجہ

شہد کی کاشتکاری کے لیے مزدوروں کی ضرورت بھی نہیں پڑتی ـ گھر کے لوگ  ہی شہد کی مکھیوں کی بخوبی نگرانی کرسکتے ہیں اور توقع کے مطابق آمدنی بھی حاصل کرسکتے ہیں ـ گرمی کے موسم میں شہد کی مکھیوں کے چھتوں سے شہد بہ آسانی حاصل کیا جاسکتا ہے لیکن بارش کے موسم میں پیٹی میں مکھیوں کا جمع کرنا مشکل ہوجاتا ہے ـ

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز