حیدر آباد : برہم عاشق نے سر راہ مٹی کا تیل ڈال کر لگادی آگ ، اسپتال میں دوران علاج 25 سالہ لڑکی کی موت

Dec 22, 2017 05:41 PM IST | Updated on: Dec 22, 2017 05:41 PM IST

حیدرآباد: حیدرآباد میں برہم عاشق کی جانب سے ایک 25 سالہ لڑکی پر مٹی کا تیل ڈال کر آگ لگادینے کا سنسنی خیز واقعہ سامنے آیا ہے ۔ اس واقعہ میں جھلسنے کی وجہ سے متاثرہ لڑکی کی علاج کے دوران گاندھی اسپتال میں موت ہوگئی ۔ لالہ گوڑہ کی رہنے والی سندھیا رانی کام سے گھر واپسی کے دوران جب ایک سڑک سے گزررہی تھی تو عاشق نے مٹی کا تیل ڈال کر آگ لگادیا اور فرار ہوگیا۔ اس واقعہ میں سندھیا 70فیصد تک جھلس گئی تھی ۔

اطلاع پر پولیس وہاں پہنچی جس نے متاثرہ سے بات کی ۔سندھیا نے پولیس کو بتایا کہ کارتک نے اس کو آگ لگائی ۔ گزشتہ چند دنوں سے وہ اسے ہراساں کررہا تھا۔سندھیا ایک کمپیوٹر آپریٹر تھی اور وہ سانتھی نگر میں کام کرتی تھی ۔ بتایا جاتا ہے کہ 28 سالہ کارتک بھی اس کا ساتھ کام کرچکا ہے۔

حیدر آباد : برہم عاشق نے سر راہ مٹی کا تیل ڈال کر لگادی آگ ، اسپتال میں دوران علاج 25 سالہ لڑکی کی موت

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز