ہيراكھنڈ ایکسپریس کے 9 ڈبے پٹری سے اترے، 36 ہلاک، سازش کا خدشہ

Jan 22, 2017 08:54 AM IST | Updated on: Jan 22, 2017 03:40 PM IST

وجے نگرم (آندھرا پردیش)۔  آندھرا پردیش میں وجےنگرم ضلع کے کوماردا ڈویژن میں آج  دیر رات جگدل پور-بھونیشور ایکسپریس پٹری سے اتر گئی جس میں کم سے کم 36  افراد ہلاک اور 50 دیگر زخمی ہو گئے۔ ریلوے حکام نے آج بتایا کہ یہ واقعہ رات 11 بج کر 15 منٹ پر اس وقت پیش آیا جب ٹرین جگدل پور سے بھونیشور کی طرف جا رہی تھی۔اس ٹرین کے سات ڈبے کونیرو ریلوے اسٹیشن کے قریب پٹری سے اتر گئے۔

ریلوے اور ضلع کے تمام افسروں نے پولیس فورسز کے ساتھ موقع پر پہنچ کر راحت و بچاؤ آپریشن شروع کر دیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ تمام زخمیوں کو رائے گڈا، پاروتی پورم اور وشاكھاپٹنم کے مختلف سرکاری ہسپتالوں میں داخل کرایا گیا ہے۔ وہیں، وزیر ریل سریش پربھو ذاتی طور پر حالات کی نگرانی کر رہے ہیں۔ انہوں نے سینئر حکام کو فوری طور پر جائے حادثہ پر پہنچنے کی ہدایت دی ہے۔

ہيراكھنڈ ایکسپریس کے 9 ڈبے پٹری سے اترے، 36 ہلاک، سازش کا خدشہ

ریلوے کے مطابق حادثے کی وجہ سے 9 ڈبوں کو نقصان پہنچا ہے، جس میں 2 عام کوچ، چار سلیپر کوچ اور 2 اے سی کوچ اور ایک لگیج کوچ شامل ہیں۔ راحت اور بچاو کے لئے موقع پر دو ٹرینیں پہنچ گئی ہیں۔ حادثے کے بعد اس روٹ سے جانے والی 7 ٹرینوں کو دوسرے راستے سے بھیجا گیا ہے۔ اس حادثے کی وجہ ابھی تک صاف نہیں ہو پائی ہے، تاہم جس علاقے میں یہ حادثہ ہوا ہے وہ نکسل زدہ ہے۔

وزارت ریل کے ترجمان انل سکسینہ کے مطابق آندھرا پردیش کے وجے نگرم ضلع میں سنیچر کی رات 11:20 بجے یہ حادثہ ہوا ہے۔ آندھرا-اڑیسہ کی سرحد پر حادثہ ہوا ہے۔ جگدل پور-بھونیشور هيراكھنڈ ایکسپریس ڈیریل ہوئی ہے۔ ایک لگیج کوچ، 2 جنرل کوچ، چار سلیپر کوچ ایس6 ایس 9، اے سی 2 کوچ اے بی 1، اے سی 3 بی 2 کوچ حادثے کا شکار ہوئی ہیں۔ کل 9 ڈبوں کو نقصان پہنچا ہے۔ ہیلپ ٹیم پہنچ گئی ہے۔ لوگوں کی مدد کے لئے ہیلپ لائن نمبر جاری کئے گئے ہیں۔ فی الحال سارا دھیان راحت اور بچاؤ کے کام پر ہے۔

سکسینہ کے مطابق، ابھی تک حادثے کی وجوہات کا پتہ نہیں لگا ہے۔ تحقیقات کے بعد پتہ چلے گا۔ یہ علاقے ماؤنوازوں سے متاثر ہے، لیکن ابھی کچھ بھی واضح نہیں ہے۔

RailAccident_ANI_220117

وہیں، ساحلی ریلوے کے سابق اہم افسر تعلقات عامہ جے پی مشرا نے بتایا کہ 18448 جگدل پور-بھونیشور هيراكھنڈ ایکسپریس کے نو دبے اور انجن كنیرو اسٹیشن کے قریب پٹری سے اتر گئے۔ انہوں نے کہا کہ جائے حادثہ پر چار راحتی گاڑیاں بھیج دی گئیہیں۔واقعہ کی وجہ کا ابھی پتہ نہیں چلا ہے۔ بہر حال، رائے گڑھ کے نائب ضلع مجسٹریٹ مرلی دھر سوین نے دعوی کیا کہ قریب 100 لوگوں کے زخمی ہونے کا خدشہ ہے۔ ہلاکتوں کی تعداد بڑھ سکتی ہے کیونکہ بہت سے لوگ پھنسے ہوئے ہیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز