علی پور کی قدیم جامع مسجد کی ازسرنوتعمیر ہند۔ ایران فن تعمیر کا خوبصورت نمونہ

Oct 06, 2017 07:10 PM IST | Updated on: Oct 06, 2017 07:10 PM IST

علی پور۔ بنگلورو کے قریب واقع علی پور کی نئی جامع مسجد ان دنوں لوگوں کی توجہ کا مرکز بنی ہوئی ہے۔ اس مسجد  کوجدید اسلامی فن تعمیر کا ایک خوبصورت نمونہ بنانے کی کوشش کی گئی ہے۔ کرناٹک کے دارالحکومت بنگلورو سے70کیلومیٹر کی دوری پر واقع علی پورکو ریاست میں شیعہ مسلمانوں کا مرکز سمجھاجاتا ہے۔ یہاں کے مسلمانوں کیلئے اب خوشی کی کوئی انتہا نہیں۔ کئی سالوں کی جدوجہد کے بعد یہاں کی قدیم جامع مسجد کی جگہ عالیشان، خوبصورت مسجد کی تعمیرعمل میں آئی ہے۔

انڈو۔ ایران فن تعمیر کی طرز پراس مسجد کو تعمیر کیا گیا ہے۔ دومنزلہ اس مسجد کے اندر اور باہر تقریبا پانچ ہزارمصلی بیک وقت نمازادا کرسکتے ہیں۔ مسجد کے دروازوں اور محرابوں پر قرآن کی آیتیں تحریر کی گئی ہیں۔ چھوٹے سے مقام علی پورمیں جامع مسجد کے علاوہ خوبصورت امام باڑے، عاشورخانے، شبیہ کربلا،  شبیہ نجف اور مذہبی اہمیت کی حامل دیگر عمارتیں موجود ہیں۔ محرم کےآغازسے لیکرمکمل دو ماہ آٹھ دنوں تک یہاں مجالس کا اہتمام ہوتا ہے۔

علی پور کی قدیم جامع مسجد کی ازسرنوتعمیر ہند۔ ایران فن تعمیر کا خوبصورت نمونہ

بیجاپور کی عادل شاہی حکومت کے خاتمہ کے بعد میرمصطفی حسین عابدی نے علی پور کی بنیاد رکھی۔ اس تاریخی مقام کی علمی وادبی فضا سے کئی علما،ادبا، شعرا، دانشور اور فنکارمنظرعام پر آئےہیں۔  یہاں قدیم جامع مسجد کی ازسرنوتعمیرکے بعد علی پور کی خوبصورتی میں مزید اضافہ ہوا ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز