جلی کٹو پر آرڈیننس لائے گی تمل ناڈو حکومت ،آج اپواس پر اے آر رحمان ، وشوناتھن آنند بھی آئے حمایت میں

Jan 20, 2017 11:52 AM IST | Updated on: Jan 20, 2017 11:57 AM IST

چنئی: بڑے پیمانے پر احتجاج کے درمیان تمل ناڈو حکومت نے ایک دودن میں جلی کٹو (سانڈوں کو قابو میں کرنے کا کھیل) کے انعقاد کے لئے ایک ہنگامی آرڈیننس کے اعلان کا آج فیصلہ کیا ہے۔ وزیر اعلی او پنیر سیلوم نے ،جنھوں نے کل وزیر اعظم سے ملاقات کی تھی ،آج صبح نئی دہلی میں صحافیوں کو بتایا کہ قانونی ماہرین سے صلاح و مشورہ کے بعد آرڈیننس کا مسودہ تیار کر کے اسے مرکزی وزارت داخلہ کو بھیج دیا گیا ہے۔

مسٹر پنیر سیلوم نے کہا کہ اس آرڈیننس کو منظوری کے لئے صدرجمہوریہ پرنب مکھرجی کے پاس بھیجا جائیگا۔ انکی منظوری کے بعد اسے تمل ناڈو کے گورنر سی ایچ ودیا ساگر راؤ کے پاس بھیجا جائیگا۔ گورنر کی اجازت ملنے کے بعد اس آرڈیننس کا اعلان ایک دو دن میں کردیا جائیگا۔ انھوں نے کہاکہ مرکزی حکومت کی مدد سے جیسا کہ جناب مودی نےیقین دہانی کرائی ہے ، آرڈیننس کے اعلان کے بعد ، جلی کٹو کا انعقاد ایک دو دن میں کیا جائیگا۔

جلی کٹو پر آرڈیننس لائے گی تمل ناڈو حکومت ،آج اپواس پر اے آر رحمان ، وشوناتھن آنند بھی آئے حمایت میں

مسٹر پنيرسیلوم نے اس مسئلے پر بڑے پیمانے پر احتجاجی مظاہرہ کررہے ریاست کے طلبا اور نوجوانوں سے احتجاج ختم کرنے کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ ریاستی حکومت کے اعلی افسران اس آرڈیننس کے مسودے کو جلد نافذ کروانے کے لئے نئی دہلی میں رکیں گے۔ مظاہرین کو ایک دو دنوں کے اندر جلي كٹو کے انعقاد کا یقین دلاتے ہوئے وزیر اعلی نے کہا کہ اب انہیں احتجاج ختم کرنا چاہیے۔

تاہم مخالفت کر رہے طلبا اور دوسرے مظاہرین نے وزیر اعلی کے اعلان کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ جب تک جلي كٹو پر پابندی مکمل طور پر ختم نہیں ہوجاتی تب تک وہ احتجاج ختم نہیں کریں گے۔

دریں اثنا آسکر فاتح موسیقار اے آر رحمان نے اعلان کیا ہے کہ وہ نادیگر سنگم کے ارکان کے ساتھ آج ایک دن کا اپواس رکھیں گے۔ یہ اپواس وہ جلي كٹو پر پابندی کے خلاف مظاہرہ کر رہے لوگوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کے لئے کریں گے۔نادیگر سنگم جنوبی ہندوستان کےفنکاروں کی یونین ہے۔ رحمان نے جمعرات کو ٹوئٹر پر لکھا تھا کہ میں تمل ناڈو کی روح کی حمایت میں جمعہ کو اپواس رکھوں گا۔

ادھر معروف اداکار کمل ہاسن کے ذریعہ جلی کٹو کی حمایت کئے جانے کے بعد اب سابق شطرنج عالمی چمپئن وشوناتھن آنند نے بھی اس کی حمایت کی ہے ۔ مایہ ناز شطرنج کھلاڑی نے ٹویٹ کرکے کہا کہ میری ریاست پھر سے ترقی کررہی ہے ، ایک آواز میں ، پر امن طریقے سے ، جس پر فخر کی جانا چاہئے ۔انھوں نے کہا کہ آج کی نسل ماڈرن بھلے ہی ہو گئی ہو ،لیکن ثقافت کی جڑ آج بھی مضبوط ہے ۔جلی کٹو ایک ثقافتی علامت ہے اور اس کا احترام کیا جانا چاہئے ۔ میں جانوروں کے حقوق کی حمایت کرتاہوں ،لیکن یہاں بات دوسری ہے ۔ یہ ثقافت سے وابستہ معاملہ ہے ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز