کرناٹک ضمنی الیکشن میں کانگریس۔ جے ڈی (ایس) اتحاد 4 سیٹوں پر کامیاب ، بی جے پی کو ملی 1 سیٹ

کانگریس جے ڈی (ایس) اتحاد کی جھولی میں بیلاری اور مانڈيا لوک سبھا سیٹ کے علاوہ اسمبلی کی جم كھنڈي اور رام نگرم نشستیں آئی ہیں

Nov 06, 2018 04:09 PM IST | Updated on: Nov 06, 2018 04:09 PM IST

 کرناٹک میں لوک سبھا کی تین اور اسمبلی کی دو نشستوں پر ہونے والے ضمنی انتخاب میں کانگریس اور جنتا دل (سیکولر) اتحاد کو چار سیٹوں پر کامیابی ملی ہے جبکہ بی جے پی کو ایک سیٹ پر ہی اکتفا کرنا پڑا۔ کانگریس جے ڈی (ایس) اتحاد کی جھولی میں بیلاری اور مانڈيا لوک سبھا سیٹ کے علاوہ اسمبلی کی جم كھنڈي اور رام نگرم نشستیں آئی ہیں۔

اتحاد سے کانگریس کے یو ایس اوگرپا نے بی جے پی کی مضبوط گرفت والی نشست بیلاری میں بی جے پی کے جے شانتا کو 214826 ووٹوں سے شکست دیکر بڑی جیت درج کی ۔ معدنی وسائل سے بھرپور اس علاقے پر بی جے پی کی تقریبا دو دہائیوں کی گرفت کو کانگریس نے توڑ دیا۔ جی ڈی ایس کے ایل شیورام نے مانڈیا لوک سبھا سیٹ پر بی جے پی کے امیدوار  ڈاکٹر سدارمیا کو 324925 ووٹوں سے شکست دی ۔ بی جے پی نے اپنے گڑھ  شموگا میں اپنی جیت کا سلسلہ برقرار رکھا ہے۔ بی جے پی کے ریاستی صدر اور سابق وزیر اعلی بی ایس یدی یورپا کے بیٹے بی وائی راگھویندر نے 52،148 ووٹوں کے فرق سے یہاں جیت حاصل کی ہے۔

کرناٹک ضمنی الیکشن میں کانگریس۔ جے ڈی (ایس) اتحاد 4 سیٹوں پر کامیاب ، بی جے پی کو ملی 1 سیٹ

اتحاد سے کانگریس کے یو ایس اوگرپا نے بی جے پی کی مضبوط گرفت والی نشست بیلاری میں بی جے پی کے جے شانتا کو 214826 ووٹوں سے شکست دیکر بڑی جیت درج کی ۔

دو اسمبلی سیٹوں میں کانگریس کے امیدوارآنند نيام گوڑا نے جم كھنڈي میں 39480 ووٹوں کےفرق سے بی جے پی کے سری کانت کلکرنی کو شکست دی جبکہ رام نگرم میں انیتا كمارسوامي نے بی جے پی کے امیدوار چندرشیکھر کو 10937 ووٹوں کے فرق سے شکست دے دی۔ بی جے پی نے ووٹ ڈالنے سے پہلے بھی اسمبلی پر اپنی شکست قبول کرلی تھی کیونکہ ضمنی انتخاب سے دو روز قبل ہی ان کے امیدوار نے نامزدگی واپس لے لی ۔

سابق وزیر اعلی اور کانگریس کے لیڈر سدارميا نے بیلاری میں کانگریس کی جیت کی تعریف کرتے ہوئے ٹویٹ کیا کہ بی جے پی دور حکومت کو ختم کرنے کے لئے اندھیرے سے آگے بڑھ کر ووٹر چتردشي / دیوالی تہوار منا رہے ہیں۔ وہیں، کرناٹک کانگریس کے صدر دنیش گنڈروؤ نے ٹویٹ کرکے کہا کہ یہ ریاست میں کانگریس جے ڈی ایس اتحاد کی شاندار فتح ہے اور بی جے پی کو1۔ 4 سے شکست دی ہے۔ انہوں نے کہا، ’’لوگوں نے کرناٹک میں بی جے پی کی منفی سیاست کو مسترد کردیا ہے اور لوگوں نے مسائل کو حل کرنے میں مرکزی حکومت کی مرکز میں ناکامی پر ناراضگی ظاہر کی ہے۔ میں تمام کانگریس کے فاتحین کو مبارکباد دیتا ہوں‘‘۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز