جارج کے خلاف سی بی آئی کی ایف آئی آر بی جے پی کی سیاسی چال ، استعفی نہیں لیا جائے گا : سدا رمیا

Oct 27, 2017 07:18 PM IST | Updated on: Oct 27, 2017 07:18 PM IST

بنگلورو: ریاستی وزیر برائے بنگلورو ترقیات کے جے جارج سے حکومت نے استعفی نہیں لینے کا فیصلہ کیا ہے  ـ کرناٹک کے وزیر اعلیٰ سدرامیا نے جارج کے استعفے کو غیر ضروری قرار ددیتے ہوئے کہا کہ اس معاملہ کی جانچ پہلے ہی کی جاچکی ہے اور رپورٹ بھی پیش کی جا چکی ہے۔ اس وقت جارج نے وزیر داخلہ کے عہدہ سے استعفی دے دیا تھا۔ بی جے پی ان کو بار بار پریشان کرنا چاہتی ہے ، اس لئے ہی سی بی آئی نے دوبارہ ایف آئی آر درج کرائی ہے۔

بنگلورو میں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ سدارمیا نے کہا کہ ڈی وائی ایس پی گنپتی کی مبینہ خودکشی کے معاملہ کے پیش نظر جارج نے وزیر داخلہ کےعہدہ سے استعفی دے دیا تھا ۔ سی آئی ڈی کی طرف سے جانچ مکمل ہوکر جارج کو بے قصور ٹہرایا جا چکا ہے ۔ ـ اب ایک مرتبہ پھر سی بی آئی نے جارج کے خلاف جو ایف آئی آر درج کی ہے ، وہ بی جے پی سیاسی چال ہے ۔

جارج کے خلاف سی بی آئی کی ایف آئی آر بی جے پی کی سیاسی چال ، استعفی نہیں لیا جائے گا : سدا رمیا

کرناٹک کے وزیر اعلیٰ سدرامیا

ـ وزیر اعلیٰ نے مزید کہا کہ مرکزی حکومت کے گیارہ وزرا کے خلاف بھی کئی ایف آئی آر درج ہیں۔ اس کے باجود متعلقہ وزرا ابھی تک اپنے اپنے عہدوں پر فائز ہیں۔ ـ وزیراعلیٰ نے کہا کہ یو پی کے وزیراعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ کے خلاف کئی سنگین معاملات درج ہیں ،ـ اس کے علاوہ مرکزی وزرا اننت کمار ہیگڑےاور کرناٹک کے سابق وزیراعلیٰ بی ایس یدی یورپا کے خلاف بھی کئی معاملات درج ہیں اور وہ سبھی ابھی تک اپنے اپنےعہدوں پربرقرار ہیں، اس لئے جارج سےاستعفے لینےکا سوال ہی نہیں اٹھتاـ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز