کیرالہ کی نو مسلم لڑکی ہادیہ آج سپریم کورٹ میں اپنا موقف پیش کرے گی

Nov 27, 2017 12:24 PM IST | Updated on: Nov 27, 2017 12:26 PM IST

نئی دہلی۔ کیرالہ کی نو مسلم دوشیزہ ہادیہ آج سپریم کورٹ میں اپنا موقف پیش کرے گی۔ وہ سپریم کورٹ کو ممکنہ طور پر یہ بتائے گی کہ اس نے اپنی مرضی سے مذہب اسلام قبول کیا ہے اور شافعین جہاں سے نکاح کیا ہے۔ اس لئے اسے اپنے شوہر کے ساتھ رہنے دیا جائے۔

خیال رہے کہ کیرالہ ہائی کورٹ نے حکم دیا تھا کہ ہادیہ کو اس کے والد کے گھر میں رکھا جائے۔ ہادیہ ہفتہ کے روز سے ہی دلی میں ہے۔ کوچی ائیرپورٹ پر اس نے اپنے شوہر کے ساتھ رہنے کی بات کہی تھی۔ اس نے وضاحت کے ساتھ کہا تھا کہ میں ایک مسلمان ہوں، میرے اوپر کوئی دباو نہیں ہے۔ میں اپنے شوہر کے ساتھ رہنا چاہتی ہوں۔

کیرالہ کی نو مسلم لڑکی ہادیہ آج سپریم کورٹ میں اپنا موقف پیش کرے گی

ہادیہ کے شوہر شافعین جہاں نے سپریم کورٹ میں ایک عرضی داخل کر مانگ کی تھی کہ اس کی اہلیہ ہادیہ کو اس کے حوالہ کیا جائے۔

ہادیہ کے شوہر شافعین جہاں نے سپریم کورٹ میں ایک عرضی داخل کر مانگ کی تھی کہ اس کی اہلیہ ہادیہ کو اس کے حوالہ کیا جائے۔ شافعین جہاں کا کہنا ہے کہ اس نے ہادیہ سے شادی کر لی ہے اور اس کی اہلیہ نے اپنی مرضی سے مذہب تبدیل کی ہے۔ جبکہ ہادیہ کے والد کا الزام ہے کہ ان کی بیٹی کے ساتھ شافعین جہاں کا نکاح لو جہاد کا ایک حصہ ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز