کیرالہ : مولانا کے قتل کے الزام میں آر ایس ایس کے تین کارکنان گرفتار ، مسجد کے احاطہ میں کیا تھا قتل

Mar 24, 2017 07:31 PM IST | Updated on: Mar 24, 2017 07:31 PM IST

کنور : کیرالہ کے كسرگود سے پولیس کی خصوصی تفتیشی ٹیم نے ایک مولانا کے قتل کے الزام میں آر ایس ایس کے تین کارکنوں کو گرفتار کیا ہے۔ حراست میں لئے گئے ملزموں کے نام اجیش اپو، اکھل اور نتن بتائے جا رہے ہیں، وہیں جس مولانا کا قتل کیا گیا ہے ان کا نام محمد رياض تھا۔

ہندی سیاست ڈاٹ کام کی خبر کے مطابق پیر کو تقریبا ڈیڑھ بجے مولانا رياض کا محی الدین جامع مسجد کے احاطہ میں واقع کمرے میں قتل کر دیا گیا تھا۔ معاملے کی تفصیلاب بتاتے ہوئے کنور کرائم برانچ کے پولیس سپرنٹنڈنٹ اے شری نواس نے بتایا کہ اجیش نے دیر رات مولانا کے کمرے میں گھس کر کسی دھاردار ہتھیار سے ان پر حملہ کر دیا۔

کیرالہ : مولانا کے قتل کے الزام میں آر ایس ایس کے تین کارکنان گرفتار ، مسجد کے احاطہ میں کیا تھا قتل

آر ایس ایس کارکنان( فائل فوٹو)۔

تیس سالہ مولانا رياض کرناٹک کے كوڈاگو کے رہنے والے تھے اور یہاں كاسرگوڈ کے چوری میں واقع ایک مدرسہ میں درس و تدریس کا فریضہ انجام دے رہے تھے۔ فی الحال قتل کی وجہ پتہ نہیں چل پائی ہے ، لیکن پولیس اسے نفرت آمیز جرم تسلیم کرکے جانچ کر رہی ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز