تلنگانہ میں اردو کو دوسری سرکاری زبان کے درجہ کے طورپر مناسب عمل آوری کے لئے بل سازی کی تیاری

Nov 15, 2017 04:28 PM IST | Updated on: Nov 15, 2017 04:28 PM IST

حیدرآباد: تلنگانہ میں اردو کو دوسری سرکاری زبان کے درجہ کے طورپر مناسب طورپر عمل کے لئے بل کی تیاری کاکام جاری ہے۔اس سلسلہ میں محکمہ بلدی نظم ونسق اور محکمہ اقلیتی بہبود کی جانب سے کوششوں کا آغاز کردیا گیاہے۔حال ہی میں وزیراعلی کے چندرشیکھر راو نے مجلس کے فلو رلیڈر اکبر الدین اویسی کے مطالبہ پر اقلیتوں کی بہبود پر مباحث کے موقع پر یہ اعلان کیا تھا کہ ریاست کے تمام اضلاع میں ارد وکو دوسری سرکاری زبان کا درجہ دیا جائے گا اور اس پر عمل کیاجائے گا۔

انہوں نے اردو زبان کے تحفظ کے لئے بیشتر اعلانات بھی کئے تھے۔ماضی میں ریاست کے ضلع کھمم کے ماسوا دیگر اضلاع میں اردو کو سرکاری زبان کادرجہ حاصل تھا تاہم ریاست میں اضلاع کی تنظیم نو کے بعد تمام اضلاع میں اس کو دوسری سرکاری زبان کا درجہ دیا گیا ہے۔اس پر مناسب عمل کے لئے بل کی تیاری کا کام شروع کردیاگیا ہے۔ ایوان میں وقفہ سوالات کے جوابات کو تلگو اور انگریزی میں فراہم کیاجاتا تھا تاہم اب وزیراعلی کے اعلان کے بعد اردو میں بھی جوابات کی کاپی فراہم کی جارہی ہے ۔ساتھ ہی دیگر اطلاعات بھی اردو زبان میں فراہم کی جارہی ہیں۔

تلنگانہ میں اردو کو دوسری سرکاری زبان کے درجہ کے طورپر مناسب عمل آوری کے لئے بل سازی کی تیاری

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز