لنگایت دھرم کوآزاد دھرم تسلیم کرکے مذہبی اقلیت قرار دینے کا مطالبہ

گلبرگہ۔ لنگایت دھرم کا ایک طبقہ خود کو ہندو قرار دینے کے بجائے آزاد تسلیم کرکے مذہبی اقلیت قرار دینے کا مرکز سے مطالبہ کر رہا ہے۔

Sep 26, 2017 05:31 PM IST | Updated on: Sep 26, 2017 05:31 PM IST

گلبرگہ۔ لنگایت دھرم کا ایک طبقہ  خود کو ہندو قرار دینے کے بجائے آزاد تسلیم کرکے مذہبی اقلیت قرار دینے کا مرکز سے مطالبہ کر رہا ہے۔ اس ضمن میں گلبرگہ میں ایک بڑی ریلی اور جلسہ عام کا انعقاد کیا گیا۔ ریلی اور جلسے میں لاکھوں افراد نے شرکت  کی۔ لنگایت طبقے کا  کہنا ہے کہ  مذہبی اقلیت تسلیم کئے جانے سے انھیں بھی دیگر اقلیتوں کی طرح  سرکاری مراعات حاصل ہوں گے ۔ این وی کالج کا گراؤنڈ پرمنعقدہ جلسہ عام بھی کھچا کھچ بھرا ہوا نظر آیا۔ یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ لنگایت طبقے کےاس مطالبے کو ریاست کی برسر اقتدار کانگریس کی حمایت حاصل ہے، جبکہ بی جے پی، لنگایت طبقے کو ہندو مذہب سے علیحدہ کرنے کے خلاف ہے۔ بی جے  پی، کانگریس پر لنگایتوں کو تقسیم کرنے کا الزام عائد کر رہی ہے۔

 اتوارکو گلبرگہ کی سڑکوں پر چہار جانب زعفرانی جھنڈے نظرآ رہے تھے۔  کرناٹک کے دیگر اضلاع کےعلاوہ پڑوسی ریاستوں سے تعلق رکھنے والے لنگایت طبقے کے افراد اس ریلی، جلوس و جلسے میں  شرکت کیلئے پہنچے  تھے۔ لنگایت طبقہ کا ایک گروپ خود کو ہندو مذہب کا حصہ تسلیم کرنے کے بجائے لنگایت دھرم کو آئینی طور پر آزاد مذہب تسلیم کرنے کا مطالبہ کر رہا ہے۔ ایک اندازے کے مطابق ریلی اور جلسہ عام میں  تقریبا ایک لاکھ افراد نے شرکت کی۔ لنگایت طبقہ کا یہ گروپ آزاد مذہب کے ساتھ ساتھ  مذہبی اقلیت کے درجے کا بھی مطالبہ کر رہا ہے۔ کرناٹک میں آئندہ سال انتخابات متوقع ہیں۔  لنگایت طبقے کو عموماً بی جے پی کا ووٹ بینک تسلیم کیا جا تا ہے۔ سیاسی مبصرین کا کہنا ہے کہ لنگایت طبقے کے اس مطالبے کی حمایت کر کے کانگریس، بی جے پی کے ووٹ بینک میں سیندھ لگانے کی کوشش میں ہے۔

لنگایت دھرم کوآزاد دھرم تسلیم کرکے مذہبی اقلیت قرار دینے کا مطالبہ

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز