اقلیتی طلبا نے پوسٹ میٹرک اسکالر شپ کے لئے گلبرگہ میں کیا احتجاج

Mar 28, 2017 11:24 AM IST | Updated on: Mar 28, 2017 11:24 AM IST

گلبرگہ۔  کرناٹک کے بعض اقلیتی طلبا پوسٹ میٹرک اور میرٹ کم اسکالر شپ  نہ ملنے کی شکایت کر رہے ہیں ۔ ان طلبا کا کہنا ہے کہ ان کے گزشتہ  تعلیمی سال کے کچھ پرچے باقی رہنے سے بیک لاگ کا بہانہ بنا کر انھیں اسکا لر شپ سے محروم کیا جا رہا ہے۔ اس ضمن میں اقلیتی طلبا نے گلبرگہ میں احتجاج کیا ۔ اس ضمن میں احتجاجی طلبا نے ڈی سی آفس کے توسط سے مرکزی و ریاستی وزارت اقلیتی امور اور وزیر اعلیٰ کو ایک مکتوب روانہ کیا ۔  اسکالر شپ نہ ملنے کی صورت میں  طلبا غیر معینہ مدت کی بھوک ہڑتال کا بھی  انتباہ  دے رہے ہیں۔

 بی ای، بی ٹیک، بی ایس سی ایگری کلچر جیسے ٹیکنکل کورسز وغیرہ میں زیر تعلیم یہ طلبا  اس کڑی دھوپ میں اپنے حق کے لیے احتجاج پراتر آئے ہیں ۔ انھیں اب تک  رواں تعلیمی سال کی پوسٹ میٹرک اسکالر شپ نہیں مل پائی ہے۔  یہ طلبا اپنے کالجوں میں ریگولر اسٹوڈنٹس ہیں لیکن ان کے ساتھ مسئلہ یہ ہے کہ گزشتہ تعلیمی سال میں  یہ کچھ پرچوں میں فیل ہوئے  ہیں  جس کی وجہ سے انھیں ابھی تک اسکالرشپ نہیں ملی ہے۔ برہم احتجاجی طلبہ مرکزی حکومت پر اقلیتت و دلت مخالف ہونے کا الزام عائد کر رہے ہیں ۔ ان طلبا کا کہنا ہے کہ دانستہ طور پر اقلیتی طلبا کو اسکالر شپ سے محروم کیا جا رہا ہے۔

اقلیتی طلبا نے پوسٹ میٹرک اسکالر شپ کے لئے گلبرگہ میں کیا احتجاج

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز