کرناٹک : جنتا دل سیکولر کا اقتدارمیں آنے پر گلبرگہ میں مسلم یونیورسٹی قائم کرنے کا اعلان

Mar 08, 2017 10:42 PM IST | Updated on: Mar 08, 2017 10:52 PM IST

گلبرگہ : جنتا دل سیکولر نےکرناٹک میں اقتدار میں آنےکے بعد اقلیتوں کے لیے آرٹی ای کے تحت بارہویں تک مفت تعلیم فراہم کرنے کی یقین دہانی کرائی ہے۔ علاوہ ازیں شہرگلبرگہ میں کرناٹک مسلم یونیورسٹی کے نام سے ایک یونیورسٹی قائم کرنے کا بھی اعلان کیا ہے۔

گلبرگہ میں پارٹی کے اقلیتی کنونشن سےخطاب کرتے ہوئے جےڈی ایس لیڈروں نے آئندہ انتخابات میں اقتدار میں آنے کا دعویٰ کیا ۔ جے ڈی ایس لیڈروں کا کہنا تھا کہ بی جے پی کو صرف علاقائی جماعتیں ہی روک سکتی ہیں ۔ دہلی اور بہار اس کی مثال ہیں ۔ جے ڈی ایس لیڈروں نے دعوی کیا کہ کرناٹک میں بھی علاقائی جماعت جے ڈی ایس ہی بی جے پی کو اقتدار میں آنے سے روکے گی ۔

کرناٹک : جنتا دل سیکولر کا اقتدارمیں آنے پر گلبرگہ میں مسلم یونیورسٹی قائم کرنے کا اعلان

خیال رہے کہ کرناٹک میں مسلمانوں کی آبادی 80 لاکھ کے آس پاس ہے جو کہ کل آبادی کا 14 فیصد حصہ ہے۔ ایسے میں آئندہ انتخابات میں مسلمانوں کے ووٹ تما م سیاسی جماعتوں کے لیے اہم ہوں گے ۔ کانگریس اور جے ڈی ایس دونوں کی نظریں مسلم ووٹرس پر مرکوز ہیں۔ آئندہ انتخابات کے پیش نظر جے ڈی ایس ریاست کے مختلف اضلاع میں اقلیتی کنونشن منعقد کرکے اقلیتوں کو لبھانے کے لیے وعدے کر رہی ہے۔

گلبرگہ شمال پر جے ڈی ایس کی خاص نظریں ہیں۔ گلبرگہ شمال میں70 فیصد سے زائد مسلم ووٹرس ہیں۔ ایسے میں جے ڈی ایس لیڈر نے گلبرگہ شمال کے مسلمانوں کو راغب کرنے کے لیے بھی اعلانات کئے ۔ جے ڈی ایس لیڈروں نے کہا کہ سچر و رنگناتھ کمیشن کی رپورٹیں بتا رہی ہیں کہ کانگریس مسلمانوں کی کتنی ہمدرد ہے۔ جے ڈی ایس لیڈر نے سچر اور رنگناتھ کمیشن کی سفارشات پر کانگریس سے جواب طلب کیا ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز