پاکستان کی جیت پر آتش بازی کے الزام میں گرفتار افراد کو نہیں مل پائے گی ضمانت ، لگایا گیا یہ سنگین الزام

Jun 22, 2017 09:41 PM IST | Updated on: Jun 22, 2017 09:41 PM IST

بنگلور: گزشتہ اتوار کو آئی سی سی چیمپئنز ٹرافی 2017 کے فائنل میچ میں ہندوستان کے خلاف پاکستان کی جیت پر آتش بازی کے الزام میں کرناٹک کے كوڈاگو ضلع سے گرفتار کئے گئے تین افراد پر مذہبی جذبات کو مجروح کرنے کا الزام عائد کیا گیا ہے۔ پولیس کا کہنا ہے کہ ان لوگوں کو ضمانت نہیں مل پائے گی، کیونکہ یہ جرم غیر ضمانتی جرائم کے زمرے میں آتا ہے۔

این ڈی ٹی وی کی خبر کے مطابق بی جے پی کے دو کارکنوں کی طرف سے پولیس میں شکایت درج کروائے جانے کے بعد پیر کو یہ گرفتاریاں فرقہ وارانہ طور پر حساس علاقوں میں شمار کئے جانے والے كوڈاگو ضلع میں کی گئی تھیں۔گزشتہ اتوار کو پاکستانی ٹیم نے ٹیم انڈیا کو 180 رنز سے شکست دے کر پہلی مرتبہ آئی سی سی چیمپئنز ٹرافی کا خطاب جیتا تھا۔

پاکستان کی جیت پر آتش بازی کے الزام میں گرفتار افراد کو نہیں مل پائے گی ضمانت ، لگایا گیا یہ سنگین الزام

file photo

كوڈاگو کے سینئر پولیس افسر راجندر پرساد نے کہا کہ یہ لوگ کشل نگر اور سونٹي كوپا کے درمیان ہائی وے پر آتش بازی کر رہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ اس حرکت کی وجہ سے فرقہ وارانہ کشیدگی پھیل جانے کا خدشہ تھا، اس لیے انہیں گرفتار کر لیا گیا۔ گرفتار تینوںملزم ظہیر، ریاض اور عبد الصمد جیل میں بند ہیں، جبکہ ان کا چوتھا ساتھی منیر فرار ہے۔

ادھر مدھیہ پردیش میں بھی پاکستانی ٹیم کی حوصلہ افزائی کرنے کے الزام میں 15 افراد کو گرفتار کر کے ان کے خلاف بغاوت کا سنگین الزام لگایا گیا تھا، تاہم ریاستی حکومت نے اب ان الزامات کو واپس لے لیا ہے اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی کو بگاڑنے کا الزام لگایا ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز