تمل ناڈو:بیوہ نے لگائی بندی تو افسران نے پینشن دینے سے کیا انکار

تمل ناڈو میں ایک 77 سال کی بیوہ کو پینشن دینۦ سے منع کیا گیا۔الزام ہیکہ بہوہ نے بندی لگائی تھی۔اس کی وجہ سے سرکاری افسران نے اسے پیشن دینے سے انکار کر دیا ۔

Apr 16, 2018 08:47 AM IST | Updated on: Apr 16, 2018 08:53 AM IST

تمل ناڈو میں ایک 77 سال کی بیوہ کو پینشن دینے سے منع کیا گیا۔الزام ہیکہ بہوہ نے بندی لگائی تھی۔اس کی وجہ سے سرکاری افسران نے اسے پیشن دینے سے انکار کر دیا ۔افسران کی دلیل ہیکہ خاتون بیوہ ہو کر بندی کیسے لگا سکتی ہے۔

خاتون کی بہو کے مطابق جب وہ لوگ دفتر پہنچے تو متعلقہ افسر سو رہا تھا۔انہوں نے افسرکو پینشن فارم وغیرہ چیزیں دیں تو اس نے کہا کہ ایک بیوہ بندی کیسے لگا سکتی ہے۔افسر نے بیوہ سے شوہر کی چتا کی راخ بھی سر پر لگانے کی بات کہی۔

تمل ناڈو:بیوہ نے لگائی بندی تو افسران نے پینشن دینے سے کیا انکار

علامتی تصویر

اہل خانہ کے مطابق جب بڑے افسران سے اس شخص کی شکایت کی گئی تو انہوں نے بھی اس کی حمایت کی۔واضح ہو کہ بیوہ کے شوہر الیکٹریکل اور مکینیکل محکمہ میں کام کرتے تھے۔بتایا جا رہا ہے کہ گھر والوں کی اقتصادی حالت اچھی نہیں ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز