Live Results Assembly Elections 2018

شاعرہ مہ جبین نجم : کتابوں، رسالوں اور مشاعروں کے بعد سوشل میڈیا کے سہارے لوگوں تک پہنچنے کی کوشش

اردو کے کئی شعرااور ادبا اپنے کلام کوعوام تک پہنچانے کیلئے سوشل میڈیا کا خوب سہارا لے رہے ہیں۔ میسور کی شاعرہ مہ جبین نجم بھی انہیں میں ایک ہیں

Jul 24, 2017 11:31 PM IST | Updated on: Jul 24, 2017 11:31 PM IST

میسور : جوں جوں انٹرنیٹ کی رفتاراور رسائی میں اضافہ ہورہا ہے ، سوشل میڈیا کا استعمال بھی بڑھتا جا رہا ہے۔ اردو کے کئی شعرااور ادبا اپنے کلام کوعوام تک پہنچانے کیلئے سوشل میڈیا کا خوب سہارا لے رہے ہیں۔ میسور کی شاعرہ مہ جبین نجم بھی انہیں میں ایک ہیں۔

مہک مہک سی گئی میں گلاب کی صورت

شاعرہ مہ جبین نجم : کتابوں، رسالوں اور مشاعروں کے بعد سوشل میڈیا کے سہارے لوگوں تک پہنچنے کی کوشش

وہ بس گیا میری آنکھوں میں خواب کی صورت

میسور کی شاعرہ پروفیسر مہ جبین نجم غزال اپنی شاعری اورافسانوں کے ذریعہ خواتین کےجذبات، احسات کی نمائندگی کرتی آئی ہیں۔ اس شاعرہ نے کتابوں، اخباروں، رسالوں اور مشاعروں کے ذریعہ اپنے کلام کوعوام تک پہنچانےکی کوشش کی ہے۔ اب یہ شاعرہ سوشل میڈیا کا بخوبی استعمال کر رہی ہیں۔ مہ جبین نجم نے اپنے سبھی منتخب اشعار کوخوبصورت گرافک امیجس میں تبدیل کیاہے۔ شعرکی معنویت اورکیفیت کےاعتبارسےکئی دلکش تصاویر تیارکئےہیں۔ زیادہ ترتصاویر پررومن رسم الخط میں اشعاردرج ہیں تاکہ غیراردو داں بھی اردو کی شاعری سے لطف اندوزہوسکیں۔

Loading...

میسور یونیورسٹی کے فائن آرٹس کالج کی پرنسپل مہ جبین نجم کہتی ہیں کہ موجودہ دور میں نوجوان نسل کو اردو زبان وادب کی جانب راغب کرنے کی ضرورت ہے۔ یہ ضرورت صرف کتابوں، رسالوں سے پوری نہیں ہونے والی۔ انفارمیشن اینڈ ٹکنالوجی کے ذرائع کا بھرپور استعمال کرنا ہوگا۔

زخموں سےبہت چورتھی میں، مجھ کوخبر کیا

پتھر میری جانب یہاں کس کس نےاُچھالے

مہ جبین نجم کا ہراحساس ایک خوبصورت تصویر بن کرلوگوں کے سامنے آ رہا ہے۔ ان کی اس کوشش کو کامیاب بنانے میں ان کے شریک حیات ناصرالدین اور بیٹے ساحل بھی ان کو بھرپور تعاون حاصل ہے۔ بحرحال اس خاتون ادیبہ اورشاعرہ کے کلام کی سوشیل میڈیا میں خوب پذیرائی ہو رہی ہے۔

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز