جسم فروشی کا کاروبار ترک کرنے پر خواتین کو وظیفہ دیا جائے گا

تلنگانہ کے سدی پیٹ ضلع کے ڈپٹی کمشنر پولیس جی نرسمہا ریڈی نے کہا ہے جسم فروشی کا کاروبار ترک کرنے پر خواتین کو وظیفہ دیا جائے گا ۔

Jul 11, 2018 02:11 PM IST | Updated on: Jul 11, 2018 02:11 PM IST

تلنگانہ کے سدی پیٹ ضلع کے ڈپٹی کمشنر پولیس جی نرسمہا ریڈی نے کہا ہے کہ اگر جسم فروشی کا کاروبار کرنے والی خواتین اس پیشہ کو ترک کرتی ہیں تو تنہا زندگی گزارنے والی خواتین کے طور پر ان کی نشاندہی کرتے ہوئے انہیں وظیفہ دیا جائے گا ۔تلنگانہ حکومت تنہا زندگی گزارنے والی خواتین کووظیفہ فراہم کررہی ہے ۔ نرسمہا ریڈی نے ککنور پلی پولیس اسٹیشن کے حدود میں آنے والے رامچندرا نگر گاؤں کی ان جسم فروشی کرنے والی خواتین کے کونسلنگ سیشن سے خطاب کرتے ہوئے انہیں یقین دہانی کروائی کہ انہیں قرض بھی جاری کئے جائیں گے تاکہ وہ اپنا چھوٹا موٹا کاروبار شروع کرسکیں ۔

انہوں نے کہا کہ ان خواتین کو سلائی مشینیں بھی دی جائیں گی تاکہ وہ ایک احترام والی زندگی بسر کرسکیں ۔ ریڈی نے وعدہ کیا کہ ان خواتین کے بچوں کو حکومت کی جانب سے چلائے جانے والے ویلفیر اینڈ ریسیڈنشیل اسکولس میں داخلے اور قیام کی سہولت بھی فراہم کی جائے گی ۔

جسم فروشی کا کاروبار ترک کرنے پر خواتین کو وظیفہ دیا جائے گا

علامتی تصویر

انہوں نے ان خواتین پر زور دیا کہ وہ اس پیشہ کو ترک کرتے ہوئے حکومت کی جانب سے شروع کردہ فلاحی پروگراموں سے استفادہ کے ذریعہ ایک باوقار زندگی گزاریں ۔انہوں نے یقین دہانی کروائی کہ تمام سرکاری اسکیمات میں ان خواتین کو ترجیح دی جائے گی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز