ووٹ بینک کی سیاست کیلئے وزیر اعظم مودی فرقہ وارایت کو سامنے لارہے ہیں : سیتا رام یچوری

سی پی ایم کے جنرل سکریٹری سیتارام یچوری نے ملک بھر میں اقلیتوں پر بڑھتے حملوں پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے آج الزام لگایا کہ ووٹ بینک کی سیاست کے ذریعہ وزیراعظم نریندر مودی فرقہ وارایت کو سامنے لارہے ہیں۔

Nov 02, 2017 07:19 PM IST | Updated on: Nov 02, 2017 07:19 PM IST

حیدرآباد: سی پی ایم کے جنرل سکریٹری سیتارام یچوری نے ملک بھر میں اقلیتوں پر بڑھتے حملوں پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے آج الزام لگایا کہ ووٹ بینک کی سیاست کے ذریعہ وزیراعظم نریندر مودی فرقہ وارایت کو سامنے لارہے ہیں۔ یچوری نے کہا کہ حیدرآباد میں 18تا22اپریل ان کی پارٹی کی 22ویں قومی کانفرنس منعقد ہوگی ۔ انہوں نے حیدرآباد کے آرٹی سی کلیانا منڈپم میں سی پی ایم کی قومی کانفرنس کی مدعوئین کی کمیٹی کی تیاری کی میٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ عوام بڑی نوٹوں کو منسوخ کرنے اور جی ایس ٹی متعارف کرنے پر اوب گئے ہیں۔

سی پی ایم پولیٹ بیورو کے رکن راگھولو نے دونوں تلگو ریاستوں تلنگانہ اور آندھراپردیش کی سرمایہ دارانہ پالیسیوں پر تشویش کا اظہار کیا۔ انہوں نے الزام لگایا کہ دونوں ریاستوں کے وزرائے اعلی نئی سرمایہ دارانہ پالیسی میں غریبوں کے مفادات کے خلاف کام کررہے ہیں۔ موجودہ حکومتیں روایتی سرمایہ داری کے خلاف کام کررہی ہیں۔ انہوں نے نشاندہی کی کہ ان پالیسیوں کے خلاف جدوجہد جاری رہے گی۔ بائیں بازو کی جماعتیں غریب افراد اور کسانوں کے ساتھ ٹہری ہوئی ہیں۔

ووٹ بینک کی سیاست کیلئے وزیر اعظم مودی فرقہ وارایت کو سامنے لارہے ہیں : سیتا رام یچوری

ریاستی اور مرکزی حکومت فرقہ پرستی کی پالیسی کے ساتھ حکومتیں چلارہی ہیں اور خواتین کو اس طرح نظرانداز کیا جارہا ہے جیسے کہ وہ سماج کا حصہ نہیں ہیں۔ سی پی ایم کے لیڈر پی مدھو نے الزام لگایا کہ آندھراپردیش حکومت غریب افراد کو اراضی نہیں دے رہی ہے ۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز