بنگلورو میں ویلفئیرپارٹی آف انڈیا کی شعبہ خواتین کا افتتاح، خواتین کی نمائندگی میں اضافہ کا فیصلہ

Mar 28, 2017 01:48 PM IST | Updated on: Mar 28, 2017 01:48 PM IST

بنگلورو۔ ’’ تاریخ میں ایسے کئی واقعات گذرے ہیں جہاں خواتین نے حکمرانی کی ہے۔ قیادت کی ہے۔ لیکن آج خواتین کوکمترسمجھ کر انہیں نظراندازکیا جا رہا ہے‘‘۔ بنگلورو میں ویلفئیر پارٹی آف انڈیا کے اجلاس میں ان خیالات کا اظہار کیا گیا ۔ بنگلورومیں ویلفئیرپارٹی آف انڈیا کےخواتین شعبہ کا افتتاح عمل میں آیا۔ کرناٹک میں ویلفئیرپارٹی قائم ہوئے پانچ سال مکمل ہوئے ہیں۔ پارٹی نےاب اپنی ویمنس ونگ قائم  کرتےہوئےخواتین کی نمائندگی میں اضافہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ویمنس ونگ کی افتتاحی تقریب میں مختلف شعبوں میں نمایاں خدمات انجام دینے والی خواتین کوتہنیت پیش کی گئی ۔ خواتین شعبہ کی نئی عہدیداروں نے کہا کہ خواتین کے حقوق کے لیے آواز اُٹھانا اوراُنکے مسائل کوحل کرنا ان کا اہم مقصد ہے۔

کرناٹک میں ویلفئیرپارٹی کی قیادت معروف مصنفہ بی ٹی للیتا نائک کررہی ہیں ۔ ویلفئیرپارٹی کے لیڈروں نے کہا کہ خواتین میں قیادت اورحکمرانی  کی صلاحیتیں موجود ہیں۔ تاریخ میں اس کی کئی مثالیں ملتی ہیں۔ ویلفئیرپارٹی کے لیڈروں نےکہا کہ کرناٹک میں پنچایت، بلدیاتی اورکارپوریشن کےانتخابات میں خواتین کوپچاس فیصد ریزرویشن حاصل ہے۔  لیکن اقلیتی اورپسماندہ طبقوں کی خواتین میں سیاسی شعورکم ہونے کی وجہ سےریزرویشن کا فائدہ ان  کونہیں مل رہا ہے۔ ویمنس ونگ کا مقصد خواتین کوسیاسی طورپربیدارکرنا اوراُنہیں انتخابات کا سامنا کرنے کے لیے تیار کرنا ہے۔

بنگلورو میں ویلفئیرپارٹی آف انڈیا کی شعبہ خواتین کا افتتاح، خواتین کی نمائندگی میں اضافہ کا فیصلہ

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز