پاکستان میں بحال ہوسکتی ہے انٹرنیشنل کرکٹ ، سری لنکا ستمبر میں دورہ کرنے کیلئے تیار

Aug 14, 2017 05:02 PM IST | Updated on: Aug 14, 2017 05:02 PM IST

کولمبو: سری لنکا کی ٹیم آٹھ سال بعد ایک بار پھر اگلے مہینہ ستمبر میں پاکستان کا دورہ کرنے پر رضامند ہو گئی ہے جہاں وہ میزبان ٹیم کے ساتھ ایک ٹوئنٹی ۔20 میچ کھیل سکتی ہے۔ سری لنکا کو متحدہ عرب امارات (یو اے ای) میں ستمبر میں پاکستان کے ساتھ تین میچوں کی ٹوئنٹی ۔20 سیریز کھیلنی ہے جس کا ایک میچ لاہور میں کھیلا جا سکتا ہے۔ سری لنکا کرکٹ (ایس ایل سی) کے صدر تلنگا سماتپالا نے کولمبو میں ہوئی ایشیائی کرکٹ کونسل (اے سی سی) کی سالانہ عام اجلاس کی میٹنگ میں کہا کہ مجھے اپنی ٹیم کو پاکستان بھیجنے میں کوئی مسئلہ نہیں ہے۔ ہماری سیکورٹی ماہرین کی ٹیم نے پاکستان کا دورہ کیا ہے اور وہاں پر سیکورٹی کی صورتحال کا جائزہ لیا ہے۔

سماتپالا نے کہا کہ ستمبر میں ہمیں پاکستان کے ساتھ تین میچوں کی ٹوئنٹی ۔20 سیریز کھیلنی ہے اور ہم ان میں سے ایک میچ لاہور میں کھیلنا چاہتے ہیں۔ سری لنکا کو پاکستان کا دورہ کرنے میں کوئی مسئلہ نہیں ہے ۔ سری لنکا کی ٹیم اس سے پہلے 2009 میں پاکستان کے دورے پر گئی تھی جہاں لاہور میں مہمان ٹیم کو لے کر جا رہی ایک بس پر دہشت گردوں نے حملہ کر دیا تھا۔ اس حملے میں سری لنکا کے چھ کھلاڑی زخمی ہو گئے تھے۔ اس کے علاوہ چھ سیکورٹی اہلکار اور دو شہریوں کی موت ہو گئی تھی۔ اس حملے کے بعد سے زمبابوے کے علاوہ کسی بھی ملک نے اب تک پاکستان کا دورہ نہیں کیا ہے۔

پاکستان میں بحال ہوسکتی ہے انٹرنیشنل کرکٹ ، سری لنکا ستمبر میں دورہ کرنے کیلئے تیار

sri lanka team file photo

ایس ایل سی کے صدر نے ایشیا کے ہمسایہ ممالک سے پاکستان میں ایک بار پھر کرکٹ کو بحال کرنے میں اس کی مدد کرنے کی بھی اپیل کیا۔ انہوں نے کہا کہ میں تمام رکن ممالک سے درخواست کرتا ہوں کہ وہ پاکستان میں ایک بار پھر کرکٹ کو بحال کرنے میں اپنا کردار ادا کریں۔ سماتپالا نے کہا کہ آئی سی سی چیمپئنز ٹرافی کے دوران لندن میں بھی دہشت گردانہ حملے ہوئے، لیکن بین الاقوامی کرکٹ کونسل (آئی سی سی) کی سیکورٹی کے تعلق سے یقین دہانی ملنے کے بعد کرکٹ چلتا رہا، اس لئے ہمیں مدد کرنے کی ضرورت ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز