انگولہ میں اسٹیڈیم میں مچی بھگڈر میں 17 افراد ہلاک

Feb 11, 2017 07:08 PM IST | Updated on: Feb 11, 2017 07:09 PM IST

لوآنڈا۔  افریقی ملک انگولہ کے ایک اسٹیڈیم میں کل ایک فٹبال میچ کے دوران ہوئی بھگڈر میں اس وقت کم از کم 17 افراد ہلاک ہوگئے۔ ایک طبی اہلکار کے مطابق شمالی شہر میں واقع اسٹیڈیم میں میچ کے دوران شائقین کی بہت زیادہ بھیڑ جمع ہوگئی تھی۔ جب لوگوں کو میچ سے قبل اندر داخل ہونے کا موقع نہیں ملا تو وہ روکاوٹیں توڑ کر اندر گھسنے لگے۔ ایسے میں بہت سے لوگ زمین پر گر گئے اور دوسرے لوگوں نے انہیں کچل دیا۔ لوگ دوسرے لوگوں کے اوپر سے گزر کر اندر داخل ہورہے تھے ۔ دبے ہوئے لوگوں کا دم گھٹ رہا تھا۔ 76 افراد زخمی ہوگئے ان میں سے 17 کی موت ہوگئی۔ سات زخمیوں کی حالت تشویشناک ہے۔

عینی شاہدین نے بتایا کہ اسٹیڈیم میں 8 ہزارکی گنجائش تھی مگر اس سے بہت زیادہ لوگ وہاں گھس آئے تھے۔ 37 سالہ مداح جوسلوا بھگڈر میں زندہ بچ گیا تھا مگراس کا پیر ٹوٹ گیا ہے۔ اس نے بتایا ’’ہم اندر داخل ہونے کی کوشش کررہے تھے مگر وہاں رکاوٹیں لگی ہوئی تھیں۔ صف والے لوگ گر گئے ان کے بعد دوسرے لوگ گرے میں لوگوں کی تیسری تہ میں تھا۔ 35 سالہ ڈومنگوس ویکا کا ہاتھ ٹوٹ گیا ہے۔ اس نے کہا جب انہوں نے ہر کسی کو اندر آنے کا موقع دیا تو اس وقت بھی ہم بھیڑ کی وجہ سے گیٹ پر پھنس گئے تھے۔

انگولہ میں اسٹیڈیم میں مچی بھگڈر میں 17  افراد ہلاک

علامتی تصویر: رائٹرز

سانتا ریٹا اور لیبولو کے درمیان انگولہ کی پہلی ڈویژن چیمپئن شپ کا میچ کھیلا جارہا تھا۔

پولیس اور فٹبال افسران نے کوئی رائے زنی نہیں کی ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز