تہران دہشت گردانہ حملہ: 7 مشتبہ افراد کو ایران نے کیا گرفتار

Jun 10, 2017 05:19 PM IST | Updated on: Jun 10, 2017 05:19 PM IST

دوبئی۔ ایرانی حکام نے راجدھانی تہران میں اس ہفتہ ہوئے حملوں میں ملوث جنگجوؤں کی مدد کرنے کے شبہ میں سات افراد کو گرفتار کرلیا ہے۔ یہ اطلاع ایک عدالتی افسر نے آج دی ہے۔ دولت اسلامیہ نے پارلیمنٹ اور اسلامی جمہوریہ کے بانی آیت اللہ روح اللہ خمینی کے مقبرے پر ہوئے خودکش بمباری اور فائرنگ کی ذمہ داری قبول کی ہے جس میں بدھ کے روز 17 افراد ہلاک ہوگئے تھے۔

عدلیہ کے صوبائی افسر احمد فیصلیان نے کہا کہ تہران سے 50 کلومیٹر دور فردیس نے سات افراد کو ’’دہشت گرد ٹیم کی مدد کرنے‘ کے شبہ میں حراست میں لیا گیا ہے۔ جمعہ کے روز حکام نے تہران میں ہوئے دوہرے حملے کے سلسلہ میں 41 مشکوک افراد کو گرفتار کرنے کا اعلان کیا تھا۔ اس کے علاوہ فارس صوبہ کے سربراہ نے بتایا کہ جنوبی لارستان علاقہ سے سات افراد کو دولت اسلامیہ سے ممکنہ تعلقات ہونے کی وجہ سے حراست میں لیا گیا ہے۔

تہران دہشت گردانہ حملہ: 7 مشتبہ افراد کو ایران نے کیا گرفتار

تہران میں ایرانی پارلیمنٹ اور آیت اللہ خمینی کے مزار پر سات جون کو ہوئے حملے میں مارے گئے لوگوں کے جنازہ میں شرکت کرتے لوگ: تصویر، رائٹرز

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز