تہران دہشت گردانہ حملے کا اہم سازشی مارا گیا ، مزید 6 گرفتار ، گرفتارملزمین کی تعداد 13 تک پہنچی

Jun 11, 2017 10:10 AM IST | Updated on: Jun 11, 2017 01:23 PM IST

دوبئی : ایران نے آج کہا کہ اس کی فوج نے دارالحکومت تہران میں بدھ کو ہونے والے دہشت گردانہ حملے کے اہم سازشی کو مار گرایا ہے۔ تسنيم نیوز ایجنسی نے ایران کے خفیہ محکمہ کے سربراہ محمود علاوي کے حوالے سے اس بات کی اطلاع دی۔ علاوہ ازیں دو حملوں کے الزام میں مزید چھ  لوگوں کو گرفتار کیا گیا ہے جس سے اس سلسلے میں گرفتار ملزمین کی تعداد 13 ہو گئی ہے۔

ایران کی خبر رساں ایجنسی فارس نے مغربی صوبے كردستان کے محکمہ انصاف کے سربراہ علي اكبر غروسي کے حوالے سے آج کہا کہ تہران میں ہوئے دو حملوں میں ملوث ہونے کے الزام میں مزید چھ لوگوں کو گرفتار کیا گیا ہے۔

تہران دہشت گردانہ حملے کا اہم سازشی مارا گیا ، مزید 6 گرفتار ، گرفتارملزمین کی تعداد 13 تک پہنچی

واضح رہے کہ تہران میں بدھ کو خودکش حملہ آور اور مسلح افراد نے پارلیمنٹ اور ملک کی اہم رہنماؤں میں شامل آیت اللہ خمینی کے مقبرے پر حملہ کر دیا تھا جس میں 17 افراد ہلاک ہو گئے تھے جبکہ متعدد افراد زخمی ہوگئے تھے۔ اس حملے کے بعد دیگر دہشت گردانہ حملوں کا خدشہ کو دیکھتے ہوئے ایران میں سیکورٹی انتظامات سخت کر دئے گئے ہیں ۔

دہشت گرد تنظیم اسلامک اسٹیٹ (آئی ایس) نے ایک بیان جاری کرتے ہوئے اس حملے کی ذمہ داری لی تھی اور ایک ویڈیو جاری کیا تھا جس میں دکھایا گیا ہے کہ ایک مسلح شخص پارلیمنٹ کے اندر موجود ہے اور وہاں پاس ہی ایک شخص زخمی حالت میں ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز